جنرل سلیمانی کی شہادت کا بدلہ یقینی ہے: پاسداران انقلاب کے کمانڈر

تہران، ارنا- پاسداران اسلامی انقلاب کے کمانڈر نے کہا ہے جنرل سلیمانی کی شہادت کا بدلہ یقینی اور حتمی ہے۔

انہوں نے ڈونلڈ ٹرمپ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ یہ ہماری سنجیدہ دہمکی ہے اور ہم سب کچھ پر عمل کرے ثابت کریں گے۔

ان خیالات کا اظہار جنرل "حسین سلامی" نے ہفتے کے روز پاسداران اسلامی انقلاب کے کمانڈرون اہلکاروں کیساتھ  منعقدہ ایک اجلاس کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ بانی اسلامی انقلاب حضرت امام خمینی ایک عظیم انسان تھے جنہوں نے مسلمانوں کی کھوئی ہوئی عظمت کی نئی جان بخشی اور اسے از سر نو زندہ کیا۔

پاسداران انقلاب کے کمانڈر نے شہدا کو ایرانی قوم کے آسمان میں چمکتے ہوئے ستارے قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ اپنی مادر وطن کی عزت کے تحفظ کیلئے قربانیاں دیں انہوں نے اللہ رب العزت کی خاطر جہاد کی راہ میں دنیا میں اپنی تمام چیزیں کھو دی اور دشمنوں کا تعاقب کیا اور انہیں سزا دی اور ایرانی قوم کا سربلند کیا۔

انہوں نے مزاحمت کی راہ میں جد و جہد کرنے والے شہید جنرل سلیمانی سے خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا وہ شہیدوں کے درمیان سورج کی طرح چکمتے ہیں اور وہ اسلام، انقلاب اورایرانی عوام سے وفاداری میں مثالی تھے۔

آئی آر جی سی کے کمانڈر ان چیف نے اس بات پر زور دیا کہ اگر یہ ایران میں اسلامی انقلاب نہ ہوتا تو امریکہ پوری دنیا پر غلبہ پا جاتا تھا۔

انہوں نے کہا کہ انقلاب اسلامی نے امریکہ کو شکست کا سامنا کیا؛ آج امریکہ کے پاس سیاسی قوت نہیں ہے اور وہ گونگا اور زمین پر تبدیلی اور ناکامی سے قاصر ہے اور امریکہ نے دنیا کیساتھ جن تمام تصورات کے ساتھ بات کی ہے وہ ٹوٹ چکے ہیں۔

انہوں نے ایرانی اسلحے کیخلاف امریکی پابندیوں کی توسیع اور اسنیپ بیک میکنزم کے نفاذ سے متعلق امریکی کوششوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ان سے کچھ حاصل نہیں ہوگا۔

انہوں نے ڈونلڈ ٹرمپ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ جنرل سلیمانی کی شہادت کا بدلہ یقینی اور حتمی ہے؛ ہماری دہمکی سنجیدہ ہے اور ہم سب کچھ پر عمل کرے ثابت کریں گے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
7 + 9 =