ایران اور پاکستان کا سرحدی صوبوں کے درمیان تعلقات کو مضبوط بنانے کا جائزہ

اسلام آباد، ارنا - کوئٹہ میں اسلامی جمہوریہ ایران کے قونصل جنرل اور پاکستان کے صوبہ بلوچستان کی حکومت کے ترجمان نے سرحدی صوبوں کے درمیان ثقافتی ، معاشی اور معاشرتی تعلقات کو فروغ دینے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کیا۔

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں ایرانی قونصل جنرل "حسن درویش وند" نے جمعہ کے روز "لیاقت شاہوانی" سے ملاقات اور دو طرفہ امور پر گفتگو کی۔
دونوں فریقین نے دلچسپی ، معاشی تعلقات اور کرونا وائرس کے خلاف مشترکہ نمٹنے کے امور پر تبادلہ خیال کیا۔
انہوں نے اسلامی جمہوریہ ایران اور پاکستان کے درمیان دیرینہ تعلقات ، اچھی ہم آہنگی، تاریخی ، مذہبی ، ثقافتی اور معاشرتی مشترکات کا حوالہ دیتے ہوئے ایرانی صوبے سیستان و بلوچیستان اور پاکستان کے بلوچستان کے درمیان ثقافتی تعلقات کو وسعت دینے کی ضرورت پر زور دیا۔
پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے حکومتی ترجمان نے بھی دونوں صوبوں کے درمیان ثقافتی اور نوجوانوں کے امور کے تبادلے کو دوبارہ شروع کرنے کا مطالبہ کیا۔
دونوں فریقوں نے سرحد پار مارکیٹوں کی ترقی اور کرونا وائرس کے چیلنج کے مشترکہ رد عمل پر بھی تبادلہ خیال کیا۔
کوئٹہ میں ایرانی قونصل جنرل نے حالیہ دنوں میں بلوچستان یونیورسٹی میں محکمہ فارسی کے سربراہ سے ملاقات کی جس میں ایران اور پاکستان کی صلاحیتوں کا جائزہ لیا گیا تاکہ وہ دونوں سرحدی صوبوں کی یونیورسٹیوں کے مابین ثقافتی اور تعلیمی عملے خصوصا طلباء اور پروفیسرز کا تبادلہ کریں۔
دونوں فریقوں نے ایران اور پاکستان کے سرحدی صوبوں میں تعلیمی اداروں کے مابین رابطے بڑھانے ، سائنسی مراکز کا دورہ کرنے اور سیستان بلوچستان اور صوبہ بلوچستان کی یونیورسٹیوں میں فارسی اور اردو کورسز کے انعقاد پر زور دیا۔


ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

متعلقہ خبریں

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 4 =