امریکہ کو ٹرگر میکانزم کے نفاذ کا اختیار حاصل نہیں ہے: ایرانی مندوب

نیویارک، ارنا – اقوام متحدہ میں ایرانی مستقل مندوب نے کہا ہے کہ امریکہ کو ٹرگر میکانزم کے نفاذ کا اختیار حاصل نہیں ہے۔

یہ بات مجید تخت روانچی نے پیر کے روز اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے کہی۔
سلامتی کونسل کے اکثریت ممبروں کے قانونی دلائل اور اس کے چیئرمین کے بیانات سے یہ معلوم ہوتا ہے کہ امریکہ کو ایران کیخلاف سابقہ پابندیوں کی واپسی اور اسنیپ بیک میکانزم  کو استعمال کرنے کا کوئی حق نہیں ہے۔

انہوں نے مشرق وسطی میں امریکہ کے کچھ تباہ کن اقدامات کا حوالہ دیتے ہوئے ان مسائل پر سلامتی کونسل اور ان کے ممبروں کی توجہ کی ضرورت پر زور دیا۔

تخت روانچی نے کہا کہ 2019 میں اسرائیل کی جانب سے فلسطینیوں کے خلاف مظالم اور غزہ کا غیر انسانی محاصرے میں بدقسمتی سے سلامتی کونسل نے صرف ایک مبصر کےطور پر تھی اور کچھ نہیں کیا۔

اقوام متحدہ میں ایران کے سفیر اور اقوام متحدہ میں مستقل نمائندے نے سنہ 2019 میں امریکہ کی جانب سے ایران کے پانیوں اور فضائی حدود کی خلاف ورزی کا ذکر کرتے ہوئے اس ملک نے اپنی مہم جوئی کو اس حد تک بڑھایا کہ امریکی صدر کے براہ راست ایک حکم کے تحت ایک دہشتگردی حملے میں انسداد دہشتگردی کے خلاف جنگ کا ہیرو ایرانی جنرل قاسم سلیمانی شہید کردیا گیااور اس اقدام کے ساتھ اکثر وکلاء کی مخالفت کے باوجود سلامتی کونسل اس حوالے سے خاموش بیٹھی۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 5 =