ایوی ایشن تنظیم نے ای اے ایس اے کو ایرانی فضائی حدود کے محفوظ ہونے کی یقین دہائی کرائی

تہران، ارنا- ایران کی سول ایوی ایشن تنظیم کے نائب سربراہ برائے بین الاقوامی امور نے ملک کی ہوائی اڈوں اور فضائی حدود کے محفوظ ہونے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ یورپی یونین ایوی ایشن سیفٹی ایجنسی (ای اے ایس اے) اور کچھ یورپی ممالک کے ساتھ خدشات دور کرنے اور ایران کی فضائی حدود کے بارے میں یقین دہانی فراہم کرنے کیلئے بات چیت کی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق یوروپی یونین کیجانب سے ایرانی فضائی حدود عبور کرنے سے متعلق ایئر لائنز کو وارننگ دینے کے ایک دن بعد سول ایوی ایشن اتھارٹی نے ایران کی فضائی حدود پر پرواز کی حفاظت پر زور دیا۔

رپورٹ کے مطابق یوروپی ایوی ایشن سیفٹی ایجنسی نے گذشتہ سال کے انتباہی پیغام میں توسیع دیتے ہوئے کہا کہ "ایران پر اڑان بھرنے والے مسافربر طیاروں کو "غلط شناخت "اور سیکیورٹی کی خطرناک صورتحال، فوجی کارروائیوں اور شہری ہوا بازی کے محکموں کے مابین ناقص ہم آہنگی کی وجہ سے مسافربر طیاروں کی غلط شناخت کا خطرہ درپیش ہے"۔

ایران میں غیر ملکی پروازوں کا از سر نو آغاز

ایران کی سول ایوی ایشن تنظیم کے نائب سربراہ برائے بین الاقوامی امور "مرتضی دہقان" نے کہا ہے غیر ملکی ایئرلاینز اور ایران کے درمیان پروازوں کا از سرنو آغاز کیا گیا ہے۔

انہوں نے کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے دوران صحت کے حفاظتی تدابیر کے رہنما خطوط پر عمل کرنے کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ہوائی اڈوں اور ایئر لائنز کے طرز عمل کی بدستور نگرانی کی جا رہی ہے۔

واضح رہے کہ یورپی یونین ایوی ایشین سیفٹی ایجنسی کے رسک اسسمنٹ گروپ نے دو مخصوص راہداریوں کے علاوہ عراقی فضائی حدود سے بچنے اور ایرانی فضائی حدود میں 25 ہزار فٹ سے نیچے کی فضائی حدود کو عبور کرنے سے بچنے کیلئے اپنی سفارش کی دوبارہ تجدید کردی۔

دہقان نے کہا کہ یورپی یونین ایوی ایشن سیفٹی ایجنسی اور کچھ یورپی ممالک کے ساتھ خدشات دور کرنے اور ایران کی فضائی حدود کے بارے میں یقین دہانی فراہم کرنے کیلئے بات چیت کی گئی ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 7 =