ایران کرونا وائرس کے نازک صورتحال مریضوں کا موثر علاج حاصل کرے گا

تہران، ارنا – نائب ایرانی وزیر صحت، تحقیق اور ٹیکنالوجی نے کہا ہے کہ اب تک کرونا وائرس کے مریضوں کے علاج کے میدان میں اچھی تحقیق کی جا چکی ہے جس کے نتیجے میں قریب مستقبل میں نازک صورتحال مریضوں کے لئے موثر علاج حاصل کریں گے۔

یہ بات ڈاکٹر "رضا ملک زادہ" نے جمعرات کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران 35 دیگر ممالک اورعالمی ادارہ صحت کے ساتھ کرونا وائرس سے نمٹنے کے لئے ایک موثر دوا معلوم کرنے کے لئے تعاون کر رہا ہے۔
ملک زادہ نے کہا کہ مطالعے کے مطابق ، ہائڈروکسیکلوروکائن اور کلیٹرا جو ایچ آئی وی کے مریضوں کے لئے استعمال کیا جاتا ہے کوویڈ 19 کے علاج کے لئے کارگر نہیں ہے۔
انہوں نے مزید کہا کہ ان ممالک نے کرونا وائرس کے مریضوں کے علاج میں مدد کے لئے تین دوائیں حاصل کی ہیں۔
انہوں نے کہا کہ اس طرح کی دوائیں ہسپتالوں میں کرونا وائرس سے اموات کو کم کرنے میں معاون ہیں۔
تفصیلات کے مطابق، ہر 10 منٹ میں ایک ایرانی کرونا وائرس سے مر جاتا ہے۔
تفصیلات کے مطابق، اسلامی جمہوریہ ایران میں اب تک ۲۵۰ ہزار و۴۵۸ افراد کرونا وائرس سے متاثر ہوچکے ہیں جن میں سے 12 ہزار 35 افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 10 =