ایران میں رواں سال غیر تیل برآمدات 41 ارب ڈالر تک پہنچ جائے گی

تہران، ارنا – ایرانی وزارت صنعت، کان کنی اور تجارت کے سپروائزر نے کہا ہے کہ رواں سال کے دوران کرونا وائرس اور پابندیوں کے باوجود غیر تیل برآمدات 41 ارب ڈالر تک پہنچ جائے گی۔

 یہ بات "حسین مدرس خیابانی" نے اتوار کے روز ایرانی پارلیمنٹ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔
انہوں نے مزید کہا کہ غیر تیل مصنوعات  کے 60 فیصد 15 پڑوسی ممالک کو برآمد کی جاتی ہیں۔
مدرس خیابانی نے کہا کہ ایرانی سال 1399 کے دوران مصنوعات کی درآمدات کا حجم کم ہوکر 3.2 بلین ڈالر ہوجائے گا۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں 13 ہزار ادھورے منصوبے موجود ہیں جن کی جسمانی ترقی 60 فیصد ہے جو 200 منصوبوں کو ہفتہ وار پروڈکشن اور جاری امید مہم کے تحت کھول دیا جائے گا۔
انہوں نے کہا کہ ان منصوبوں میں سرمایہ کاری کی رقم کو 1700 ریال ہے اور ایسے منصوبوں کی بدولت  50 ہزار افراد براہ راست اور 500 ہزار سے زیادہ افراد بالواسطہ روزگار کے مواقع حاصل کریں گے۔
ایرانی اہلکار نے کہا کہ آج ہماری سرحدوں کے 80 فیصد کھول اور ملک کی 75 فیصد سرحدی منڈیوں کی سرگرمیوں کو دوبارہ شروع کیا گیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ ایران سے افغانستان میں برآمدات کا حجم گزشتہ سال کے مقابلے میں دوگنا ہوگیا ہے۔
خیابانی نے کہا کہ پابندیوں کے باوجود ایران نے گذشتہ سال دنیا کے 100 ممالک کو 41.3 ارب ڈالر مالیت کی 135 ملین ٹن مصنوعات برآمد کرتے ہو‏ئے ایک ریکارڈ توڑ دیا۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 12 =