یورپی یونین کا ایران سے معاشی تعلقات کو معمول پر لانے پر زور

نیویارک، ارنا- اقوام متحدہ میں تعینات یورپی یونین کے مندوب نے ایران جوہری معاہدے کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے اس معاہدے کے فریم روک کے اندر ایران سے معاشی تعلقات برقرار کرنے پر زور دیا۔

ان خیالات کا اظہار "اولوف اسکوف" نے منگل کے روز ایران جوہری معاہدے کے تحت سلامتی کونسل کی قرارداد نمبر 2231 کے نفاذ سے متعلق سربراہ اقوام متحدہ کی رپورٹ کا جائزہ لینے کے حوالے سے منعقدہ اجلاس کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے گزشتہ ساڑھے تین سالوں کے دوران جوہری معاہدے سے متعلق اپنے کیے گئے وعدوں پر پوری طرح عمل کیا ہے اور حتی کہ جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی کے 14 مہینوں گزرنے اور ایران کیخلاف از سر نو پابندیاں عائد کرنے کے بعد بھی اسلامی جمہوریہ ایران اس معاہدے پر قائم رہا۔

یورپی یونین کے مندوب نے کہا کہ اس معاہدے کے تحت عالمی ایٹمی ایجنسی کو ایران کے جوہری تنصیبات تک رسائی حاصل ہے اور اسلامی جمہوریہ ایران رضاکارانہ طور پر ایڈیشنل پروٹوکول پر عمل درآمد کر رہا ہے۔

واضح رہے کہ منعقدہ اس اجلاس جو دنیا میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کی وجہ سے آن لائن انعقاد کیا گیا، میں قرارداد نمبر 2231 کے نفاذ کی تازہ ترین صورتحال سے متعلق سربراہ اقوام متحدہ کی رپورٹ کو پڑھ کر سنایا گیا۔

اس کے علاوہ اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل نے جوہری معاہدے کے تحت سلامتی کونسل کی قرارداد 2231 نمبر کے مطابق تمام ممالک کو اسلامی جمہوریہ ایران سے معاشی تعلقات برقرار کرنے کی حوصلہ افزائی کی۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 8 =