عالمی ایٹمی ایجنسی کو جوہری معاہدے کی تباہی کا آلہ کار نہیں بننے دیں گے: ظریف

تہران، ارنا- اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ نے اس بات پر زور دیا ہے کہ ہم عالمی جوہری توانائی ایجنسی کو امریکہ کے ذریعے جوہری معاہدے کی تباہی کا آلہ کار نہیں بننے دیں گے۔

ان خیالات کا اظہار ماسکو کے دورے پر آئے ہوئے "محمد جواد ظریف" نے آج بروز منگل گو اپنے روسی ہم منصب "سرگئی لاوروف" کیساتھ مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ ٹرمپ انتظامیہ بین الاقوامی معاہدوں اور تنظیموں سے علیحدہ ہونے کے عادی ہوگئی ہے لیکن ہم عالمی ایٹمی ایجنسی کو ٹرمپ کے ذریعے ایران جوہری معاہدے کی تباہی کا آلہ کار نہیں بننے دیں گے۔

ظریف نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے ہمیشہ آئی اے ای اے کے ساتھ بہت شفاف رہا ہے اور جوہری ادارہ کی 15 رپورٹوں سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ ایران نے اپنی تمام ذمہ داریوں کو پورا کیا ہے۔

ایرانی وزیر خارجہ نے کہا کہ ہم ایران کو اس تفتیش کا نشانہ نہیں بننے دیں گے جس کی دستاویزات جاسوسوں کے دعوے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اگر عالمی جوہری تونائی ادارے کو غیر معقول طریقے استعمال کرنے کا ارادہ ہو تو ہم اس سے مناسب طریقے سے برتاؤ کریں گے۔

ظریف نے کہا کہ  بہت افسوس کی بات ہوگی اگر اقوام متحدہ کے سیکریریٹ اور عالمی جوہری ادارے کے سیکریریٹ جوہری معاہدے کی تباہی کے راستے گامزن ہوجائیں۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 6 =