تہران، ارنا – ایرانی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ مغربی طاقت کے مراکز میں صہیونی اپارتھائیڈ کے تسلط کے خاتمے کا وقت آگیا ہے۔

یہ بات "محمد جواد ظریف" نے جمعرات کے روز اپنے ٹوئٹر پیج میں کہی۔
اس موقع پر انہوں نے مغربی طاقتوں کو اپنے اقتدار کے ستونوں میں صیہونیوں کے اثر و رسوخ اور استحکام پر انتباہ کرتے ہوئے کہا کہ اگر اس بارے میں کبھی بھی کوئی شک پیدا ہوتا ہے کہ کون مشرق وسطی کی پالیسیوں کو امریکہ اور مغربی ممالک پر آمادہ کررہا ہے تو اس خبر کی سرخی یہ ہے کہ اس کا جواب بلند اور واضح ہے۔
ظریف نے کہا کہ AIPAC برسوں سے امریکی پالیسی کو زہر دے رہا ہے اور واضح طور پر کانگریس کو حکم دیتا ہے لہذا مغربی طاقت کے مراکز میں صہیونی رنگ برنگی کی آمرانہ حکمرانی کے خاتمے کا وقت آگیا ہے۔
ایرانی وزیر خارجہ نے اپنے ایک اور ٹوئٹ میں کہا کہ امریکہ جس نے جوہری معاہدہ، قرارداد 2231 اور عالمی جوہری ادارے کے فیصلوں کی خلاف ورزی کی ہے، ایران کو بدنام کرنے کے لئے اقوام متحدہ اور بین الاقوامی جوہری توانائی ایجنسی کو غلط استعمال کرنے کا کوئی حق نہیں ہے۔
انہوں نے مزید کہا کہ امریکہ جس نے عراق میں دہشت گردی ، یمن اور فلسطین میں جنگی جرائم میں ملوث ہونے ، قزاقیوں ، سلامتی کونسل کی قرارداد 2231 اور بین الاقوامی جوہری توانائی ایجنسی کے فیصلوں کی خلاف ورزیوں کا اعتراف کیا ہے، ایران کو بدنام کرنے کے لئے اقوام متحدہ اور بین الاقوامی جوہری توانائی ایجنسی کو غلط استعمال کرنے کا کوئی حق نہیں ہے۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 12 =