ایرانی جنوبی پورٹ "سیراف" میں تاریخی سکے کی دریافت

 بوشہر، ارنا۔ ایران کے جنوبی صوبے بوشہر میں واقع سیراف پورٹ میں انیسویں صدی کے سنہ 1835ء سے متعلق ایک تاریخی سکے کی دریافت کی گئی۔

یہ بات بندرگاہ سیراف کے ادارہ برائے ثقافتی ورثے، دستکاری صنعت اور سیاحت کے سربراہ "مہدی آذریان" نے ہفتے کے روز میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس تاریخی سکے کا اس وقت دریافت کی گئی جب "وایت ہوس" کے تاریخی گھر میں مٹی کے برتنوں کا ایک بینک قائم کرنے کا بند و بست کیا جاتا تھا۔

آذریان نے کہا کہ موصولہ معلومات سے ایسا لگتا ہے کہ یہ سکہ ایران کے دورے پر آئے ہوئے برطانوی پروفیسر وایت ہوس کی قیادت میں برطانوی وفد سے تعلق رکھتا ہے جو سنہ 1966ء سے 1973ء تک سات سالوں کیلئے سیراف پورٹ میں کھدائی کا کام کر رہے تھے اور اسی گھر میں رہائش پذیر تھے۔

انہوں نے کہا کہ برطانیہ اور ایران کے اس مشترکہ وفد نے سیرف میں وسیع پیمانے پر کھدائی کی اور کھدائی کے بدلے میں برطانوی حکومت سے رقم وصول کی  جس سے معلوم ہوتا ہے کہ یہ سکہ جو تانبے کا بنا ہوا ہے بھی ان کا تھا۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 17 =