12 مئی، 2020 3:07 PM
Journalist ID: 2392
News Code: 83785334
0 Persons
32 ٹن فلوٹنگ پمپوں کی کھیپ ایران پہنچ گئی

تہران، ارنا – ایرانی وزیر توانائی کے مشیر برائے بین الاقوامی امور نے کہا ہے کہ یونیسف نے وزارت توانائی کے ساتھ مشترکہ کوشش میں بحران کے وقت میں تیاری کے لئے 32 ٹن کا کارگو درآمد کیا جس میں پانی اور سیوریج کی صنعت میں استعمال کے لئے کئی طرح کے فولٹنگ اور سکشن پمپ موجود تھے۔

محمدعلی فرحناکیان نے کہا کہ اس پمپوں کو سیلاب سے متاثرہ صوبوں جیسے لرستان ، خوزستان اور گلستان میں واٹر اینڈ سیوریج کمپنیوں میں تقسیم کیا جانا ہے تاکہ بحران کی تیاری میں صلاحیت میں اضافہ کیا جاسکے۔
انہوں نے مزید کہا کہ یہ کھیپ یونیسف کے عالمی انسانی سرگرمیاں بجٹ، ایرانی تجارت اور سامان بینکوں اور چیمبر آف کامرس کی مالی حمایت کے ساتھ فراہم کی گئی ہے۔
انہوں نے کہا کہ 2019 کے مارچ اور اپریل  کے شدید سیلاب کے بعد ، یونیسف نے جاپان ، کویت ، جنوبی کوریا ، سوئٹزرلینڈ اور کینیڈا جیسے امدادی ممالک کے ساتھ ساتھ نجی شعبے کے مقامی امداد دہندگان کی حمایت سے ، سیلاب کا جواب دینے کے لئے تین ملین و 134 ہزار ڈالر کی رقم اکٹھا کی تا کہ ایرانی حکومت کے ساتھ باہمی تعاون کے ذریعہ انتہائی غیرمحفوظ بچوں، مہاجرین اور تارکین وطن بچوں سمیت ضروری خدمات تک رسائی کو یقینی بنائے۔
انہوں نے کہا کہ یونیسف نے پانی ، گند نکاسی اور ماحولیاتی صحت میں ایک ملین اور 895 ہزار ڈالر جمع کرکے محکمہ توانائی کے تعاون سے سیلاب سے متاثرہ آبادیوں کو مزاحم سیوریج سسٹم کے ذریعہ محفوظ پانی تک رسائی پر خرچ کیا ہے۔
ایرانی وزیر توانائی کے مشیر نے کہا کہ اس کے علاوہ ، یونیسف ، وزارت توانائی کے تعاون سے ، گلستان اور خوزستان میں ممکنہ اور سیلاب زدہ علاقوں میں پانی اور گند نکاسی کے نظام کی مزاحمت کو مستحکم بحالی اور استحکام کی حمایت کا ارادہ رکھتا ہے۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 2 =