ایران میں کرونا کیخلاف 15 تکنیکی مصنوعات کے ابتدائی نمونے کا ڈیزائن

تہران، ارنا – ایرانی "ایران"میڈیکل سائنسز یونیورسٹی کے سربراہ نے کرونا پر اس یونیورسٹی کے محقیقین کی کوششوں کی وضاحت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس وائرس کے خلاف 15 تکنیکی مصنوعات کے ابتدائی نمونے کا ڈیزائن کیا گیا جن میں دواسازی ، تشخیصی اور سامان شامل ہیں۔

یہ بات "جلیل کوہپایہ" نے پیر کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ قریب مستقبل میں ان میں سے کچھ تکنیکی مصنوعات کامیاب اور متعلقہ حکام سے ضروری لائسنس حاصل کرنے کے بعد ملکی مارکیٹ میں داخل ہوں گی۔
کوہپایہ نے کہا کہ فروری سے کرونا وائرس پر تحقیق کرنے کی منصوبہ بندی کی گئی جس شعبے میں 200 سے زیادہ منصوبوں میں سے 80 سے زیادہ تحقیقی منصوبوں کو قبول کیا گیا ہے۔
انہوں نے مزید کہا کہ ہم معاشرے کی ضروریات کو پورا کرنے کے لئے  اطلاقیہ تحقیقوں سے فائدہ اٹھانے کی کوشش کر رہے ہیں اور کرونا وائرس کے خلاف مختلف تحقیقی کوششوں کے ابتدائی منصوبے سمیت تشخیص، علاج اور ویکسن کا آغاز کیا گیا ہے اور ہمارے محققین اپنی تمام صلاحیتوں کے ساتھ پوری کوشش کر رہے ہیں کہ مریضوں کو قیمتی خدمات فراہم کریں۔
انہوں نے کہا کہ اس یونیورسٹی کے محقیقن نے دوائیں کی تیاری میں اچھے نتائج حاصل کرنے کے لئے مختلف اقدامات اٹھایا ہے اور ہمیں امید ہے کل قریب مستقبل میں ان نتائج حاصل ہوں گے۔
یاد رہے کہ ایرانی وزارت صحت کے مطابق اب تک ملک میں مجموعی طور پر 97424 افراد کرونا وائرس کا شکار ہوگئے ہیں جن میں 78422 افراد صحت یاب ہوگئے ہیں اور اب تک مجموعی طور کرونا وائرس کی ہلاکتوں کی تعداد 6 ہزار 203 تک پہنچ چکی ہے۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 7 =