ایران میں کوویڈ-19 سے متاثرہ افراد کی روزانہ تعداد میں 53 فیصد کی کمی

تہران، ارنا- ایرانی وزیر صحت نے کہا ہے کہ ملک کےاندر کرونا وائرس کا شکار ہونے والے افراد کی روزانہ تعداد میں 53 فیصد کی کمی دیکھنے میں آئی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ مشرقی بحیرہ روم کے ممالک کے وزرائے صحت کے درمیان منعقدہ اجلاس کے 18 دنوں کے بعد ایران میں کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کی روزانہ تعداد میں 53 فیصد کی کمی دیکھنے میں آئی ہے۔

ان خیالات کا اظہار "سعید نمکی" نے آج بروز بدھ کو عالمی ادارہ صحت کے سیکریٹری جنرل اور بحیرہ روم میں واقع عالمی ادارہ صحت کے دفتر کے سربراہ سے آن لائن گفتگو کے دوران کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ 2020ء کے 2 اپریل میہنے سے اب تک یعنی مشرقی بحیرہ روم کے ممالک کے وزرائے صحت کے درمیان منعقدہ اجلاس کے 18 دنوں کے بعد ایران میں کوویڈ-19 کا شکار افراد کی روزانہ تعداد میں 53 فیصد اور اس وائرس سے متاثرہ افراد کی ہلاکتوں میں 30 فیصد کی کمی کا ریکارڈ کیا گیا ہے۔

نمکی نے کہا کہ لیکن اس بات کے باجود اسی عرصے کے دوران کرونا وائرس میں مبتلا مریضوں کی مجموعی تعداد 50 ہزار 468 سے 84 ہزار تک پہنچ گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ معاشرتی فاصلے کی پالیسی کے عین مطابق، ہم نے عالمی ادارہ صحت کے پروٹوکول کے عین تحفظات کے تحت کم خطرے والے کاروبار اور عوامی نقل و حمل  کی سرگرمیوں کا از سر نو آغاز کرنے کی اجازت دی ہے تا ہم مساجد، اسکول، یونیورسٹیاں، ریستوراں اورعوامی مقامات ویسے ہی بند رہیں گے تا کہ 10 آئندہ دنوں کے بعد ان کا دوبارہ کھولنے کا جائزہ لیا جائے گا۔

واضح رہے کہ ایرانی محکمہ صحت کے مطابق اب تک مجموعی طور پر ملک کے اندر 85 ہزار 966 افراد کرونا وائرس سے متاثر ہوچکے ہیں جن میں سے 5 ہزار 391 افراد کا انتقال ہوگئے ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha