ایرانی صوبے یزد میں غیرملکی سرمایہ کاری کیساتھ سولر پاور پلانٹ کی تعمیر

یزد، ارنا – ایرانی صوبے یزد کے اقتصادی اور خزانہ امور کے ڈائریکٹر جنرل نے کہا ہے کہ قریب مستقبل میں غیرملکی سرمایہ کاری کے ساتھ اس صوبے میں شمسی توانائی پلانٹ کی تعمیر کا آغاز کیا جائے گا۔

علی نمازی نے کہا کہ سرمایہ کاری اور اقتصادی اور تکنیکی مدد کی تنظیم نے اس سولر پاور پلانٹ کی تعمیر کے ضروری لائسنس کو جاری کیا ہے اور سرمایہ کار کام اور جگہ کی دریافت کی سہولیات کو فراہم کر رہا ہے۔
انہوں نے کہا کہ اس پاور پلانٹ کی بجلی پیدا کرنے کی گنجائش 300 میگاواٹ ہے اور سرمایہ کار کے پاس ایران کے پڑوسی ممالک میں براہ راست بجلی برآمد کرنے کا ضروری لائسنس ہے۔
انہوں نے مزید کہا کہ اس منصوبے کے لئے 300 ملین یورو سرمایہ کاری کی گئی ہے۔
تفصیلات کے مطابق، فی الحال صوبے یزد میں سات شمسی توانائی پاور پلانٹ سرگرم عمل ہے جس میں اٹلی ، فرانس ، جرمنی ، آسٹریا ، نیدرلینڈز ، قبرص ، پولینڈ اور متحدہ عرب امارات کے سرمایہ کاروں نے 76 ملین ڈالر سرمایہ کاری کی ہیں۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha