غیرملکی سیاحوں کی ایرانی شہر دامغان میں مسجد "تاریخانہ" کی سب سے زیادہ سیر

سمنان، ارنا – ایرانی صوبے سمنان کے شہر دامغان کے ادارے ثقافتی، دستکاری اور سیاحتی تنظیم کے سربراہ نے کہا ہے کہ گزشتہ سال کے دوران غیرملکی سیاحوں کے 30 فیصد نے اس شہر کی "تاریخانہ" نامی مسجد کی سیر کی۔

یہ بات "مہدی قاسمی" نے جمعرات کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
اس موقع پر انہوں نے کہا یہ تاریخی "تاریخانہ" مسجد ساسانیان دور کا متعلق ہے اور گزشتہ ایرانی سال 1398 میں 635 غیرملکی سیاحوں نے اس کا دورہ کیا۔
قاسمی نے کہا کہ گزشتہ ایرانی سال کے دوران 2100 غیر ملکی سیاح دنیا کے 23 ممالک سمیت جرمنی، اٹلی، ہالینڈ، فن لینڈ، عراق، جنوبی کوریا، ترکی، آسٹریا، جمہوریہ چیک، تاجکستان، کینیڈا، سویٹرزلینڈ، ڈنمارک، بھارت، آسٹریلیا، جاپان، پولینڈ، چین، برطانیہ، تھائی لینڈ، روس، بیلجیم اور شہر دامغان کے تاریخی مقامات کی سیر سے لطف اندوز ہوگئے۔
انہوں نے کہا کہ 490 ہزار ملکی اور غیرملکی سیاحوں نے گزشتہ سال کے دوران شہر تاریخی دامغان کا دورہ کیا۔
انہوں نے مزيد کہا کہ سیاحوں نے سب سے زيادہ دامغان کی تاریخانہ مسجد، چشمہ علی، مسجد جامع، امامزادہ محمد (ع) اور جعفر (ع)،  حصار نامی پہاڑ، پیرعلمدار، نمک جھیل، حاج علی اور لطفی گھروں کی سیر کی۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha