تھرمل پائپوں کا کمرشلائزیشن ایرانی خلائی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ کے ایجنڈے میں شامل

تہران، ارنا- ایران اسپیس ریسرچ انسٹی ٹیوٹ کے ماہرین کے ذریعے تیار کردہ تھرمل پائپز جو خلائی نظام میں استعمال ہور رہے ہیں، کے بعد اب ان کا تجارتی بنانا، ایرانی خلائی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ کے ایجنڈے میں ہے۔

ان خیالات کا اظہار ایرانی خلائی ریسرچ انسٹی ٹیوں کے سربراہ "حسین صمیمی" نے بدھ کے روز گفتگو کرتے کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ تھرمل پائپز جو ریسرچ انسٹی ٹیوٹ آف مٹیریلز اینڈ انرجی میں ڈیزائن اور بنائے گئے تھے اور ان کا کامیابی کیساتھ تجربہ کیا گیا ہے، اب متعلقہ صنعتوں میں استعمال کے لئے کمرشلائزیشن کے مرحلے میں ہیں۔

ایرانی خلائی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ کے سربراہ نے مزید کہا کہ یہ تیار کردہ تھرمل پائپز خلائی نظام میں بڑے پیمانے پر استعمال ہوتے ہیں اور سیٹلائٹ سسٹم میں حرارت پر قابو پانے کے اشارے میں سے ایک ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ تھرمل پائپز"پارس 1" نامی سیٹلائٹ میں استعمال کیے گئے ہیں، جو اس ریسرچ انسٹی ٹیوٹ میں اس وقت زیر تعمیر ہے۔

صمیمی نے کہا کہ خلائی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ مخصوص کارکردگی اور قابل اعتماد کے تھرمل پائپوں کو ڈیزائن اور تیار کرنے کا اہل ہے اوران تھرمل پائپز اور اس کی ذیلی خدمات کو ملک کی خلائی صنعت اور دیگر صنعتوں جیسے الیکٹرانک انڈسٹری، کولنگ اور ہیٹنگ سسٹم انڈسٹری، میڈیکل سامان مینوفیکچرنگ انڈسٹری وغیرہ کیلئے فراہمی پر تیار ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 8 =