کرونا وائرس کی روک تھام پر نوجوان سائنسدانوں کی صلاحیت پر فخر ہے: صدر روحانی

تہران، ارنا- اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر مملکت نے کرونا وائرس کیخلاف مقابلہ کرنے کے میدان میں سائنسدانوں، جینیس، پرڈیوسوں اور سرگرم معاشی کارکنوں کی کوششوں اور کامیابیوں کو سراہا۔

ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر حسن روحانی نے کرونا وائرس کی روک تھام کمیٹی کے اجلاس کی سائڈ لائن میں کوویڈ-19 کے حوالے سے حاصل ہونے والی کامیابیوں کی نمائش کا دورہ کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کیجانب سے تین بنیادی ڈھانچوں بشمول سائبر اسپیس، حفظان صحت اور علم پر مبنی کمپینیوں پر توجہ دینے کی وجہ سے اب ایک ایسے وقت جو دنیا کے بہت سارے ممالک کو کرونا وائرس کی روک تھام میں طبی ساز و سامان کی فراہمی کیلئے مشکلات کا سامنا ہے تو ہمیں اپنے ذہین ماہرین اور سائنسدانوں کی بے پناہ صلاحیتوں کی وجہ سے بہت کم مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

انہوں نے مزید کہا کہ حفظان صحت کے انفراسٹرکچر کو مضبوط بنانے کی وجہ سے اب ہماری طبی ٹیموں کو صحت کے شعبے میں ترقی یافتہ طبی ساز وسامان و سہولیات تک رسائی حاصل ہے۔

صدر روحانی نے مزید کہا کہ سائبر اسپیس اور الکٹرانک حکومت کے ڈھانچوں کی مضبوطی بھی اس بات کا باعث بنی ہے کہ لاک ڈاون کے دوران عوام کی ضروریات سائبر اسپیس کے ذریعے پوری ہوجائیں۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ آج بروز اتوار کو دارالحکومت تہران کے سعد آباد محل میں کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے محکمہ صنعت، کان کنی اور تجارت، محکمہ دفاع، ایرانی صدراتی دفتر کے مرکز برائے سائنس اور ٹیکنالوجی اور بعض جامعات کی تیار کردہ مصنوعات کی نمائش کا انعقاد کیا گیا۔

واضح رہے کہ ایرانی محکمہ صحت کے مطابق اب تک ملک میں مجموعی طور 58226 افراد کرونا وائرس کا شکار ہوگئے ہیں جن میں سے 3603 افراد کا انتقال ہوگئے ہیں جبکہ 22011 متاثرہ افراد بھی صحت یاب ہوگئے ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha