آئی ایم ایف سے ایرانی اپیل کی امریکی مخالفت انسانیت کیخلاف جرم ہے

تہران، ارنا- ایرانی قومی سلامتی کی اعلی کونسل کے سربراہ نے کہا ہے کہ کرونا وائرس کیخلاف مقابلہ کرنے کیلئے ایران کیجانب سے بین الاقوامی مالیاتی فنڈ سے قرضہ لینے کی اپیل کی امریکی مخالفت، انسانیت کیخلاف سنگین جرم ہے۔

ان خیالات کا اظہار ایڈمیرل "علی شمخانی" نے اتوار کے روز اپنے ایک ٹوئٹر پیغام میں کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ طبی ساز وسامان اور صحت کی مصنوعات کیخلا عائد امریکی پابندیاں، غیر قانونی اقدام اور انسانیت کیخلاف سنگین جرم ہے جس سے ایرانی عوام کیخلاف ٹرمپ کی دشمنی ظاہر ہوتی ہے۔

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ کرونا وائرس کیخلاف مقابلہ کرنے کیلئے بین الاقوامی مالیاتی فنڈ سے ایران کیجانب سے قرضہ لینے کی اپیل کی امریکی مخالفت، انسانیت کیخلاف سنگین جرم ہے۔

 یہ بات قبال ذکر ہے کہ ایرانی وزیر خارجہ نے مارچ مہینے کے دوران ایک ٹوئٹر پیغام میں کہا تھا کہ  بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کے سربراہ نے کہا کہ آیی ایم ایف کرونا وائرس سے متاثرہ ممالک کی فوری مالی حمایت کرتا ہے جس کی بنا پر ایرانی مرکزی بینک نے آئی ایم ایف سے 5 ارب ڈالر قرضہ لینے کی درخواست دی ہے۔

واضح رہے کہ ایرانی محکمہ صحت کے مطابق اب تک ملک میں مجموعی طور 58226 افراد کرونا وائرس کا شکار ہوگئے ہیں جن میں سے 3603 افراد کا انتقال ہوگئے ہیں جبکہ 22011 متاثرہ افراد بھی صحت یاب ہوگئے ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 11 =