ایران میں کورونا کی روک تھام کے لیے امریکی پابندیوں کا تباہ کن کردار

لندن، ارنا – ایرانی دارالحکومت تہران کے میئر نے کورونا وائرس کے پھیلنے اور اس وائرس کے ساتھ ممالک کی جنگ کے دوران امریکی پابندیوں پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران میں کورونا وا‏ئرس کے خلاف جنگ لڑائی میں خلل ڈال دیا ہے۔

یہ بات پیروز حناچی نے آج بروز ہفتہ برطانوی اخبار گارڈین میں اپنے ایک نوٹ میں لکھی۔

انہوں نے کہا کہ میں تہران میئر کی حیثیت سے ہر روز دیکھ رہا ہوں کہ لوگ ادویات اور طبی سامان کی کمی کی وجہ سے لوگوں کی زندگیاں ضائع ہو رہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اب ایک دوسرے کے خلاف انتقامی کارروائی اور پالیسیوں کا وقت نہیں ہے۔

پیروز حناچی نے کہا کہ امریکی پابندیوں نے نہ صرف امریکی افراد اور کمپنیوں بلکہ دوسرے ممالک کو ایران کے ساتھ قانونی کاروبار کرنے سے منع کیا ہے۔

ایرانی محکمہ صحت کے مطابق، اب تک ملک کے اندر مجموعی طور پر 55،743 افراد کو کرونا وائرس کا شکار ہوگئے ہیں جن میں سے 3،452 افراد جاں بحق ہوگئے ہیں اور 19،736 افراد کا علاج بھی ہوچکے ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 3 =