4 اپریل، 2020 3:27 PM
Journalist ID: 2392
News Code: 83738231
0 Persons
ایران اور یوریشیا کے درمیان 1۔4 ارب ڈالر کی تجارت

تہران، ارنا – ایرانی کسٹم کے ترجمان نے کہا ہے کہ یوریشین اکنامک یونین کے ساتھ ہمارے ملک کی غیر ملکی ترجیحی تجارت کے معاہدے کے نفاذ کے بعد پانچ مہینوں کے دوران 1۔4 ارب ڈالر سے زیادہ تک پہنچ گئی۔

سید روح اللہ لطیفی نے کہا کہ گزشتہ پانچ مہینوں کے دوران اسلامی جمہوریہ ایران اور یوریشیا کے درمیان تجارتی تعلقات کا حجم ایک ارب اور 489 ملین اور 232 ہزار و 265 ڈالر تک پہنچ گیا جس سے 67 فیصد برآمدات اور 33 فیصد درآمدات تھی۔
انہوں نے کہا کہ یوریشیا کو ایران کی سب سے بڑی برآمدی منزل روسی فیڈریشن ہے جس کا حجم 481 ہزار 668 ٹن سے زیادہ ہے اور اس کی مالی شرح 248 ملین 555 ہزار 102 ڈالر ہے ، جو یوریشیا کو ایران کی برآمدات کی کل قیمت کا پچاس فیصد سے زیادہ ہے۔
روس کے بعد آرمینیا 24۔6 فیصد اور قازقستان 16 فیصد کے ساتھ ایرانی مصنوعات کے درآمد کرنے والے ممالک ہیں۔
لطیفی نے کہا کہ زیادہ تر سامان روسی فیڈریشن سے درآمد کیا گیا تھا۔
انہوں نے مزید کہا کہ روس کے بعد 24۔9 فیصد کے ساتھ قازقستان اور 2۔3 فیصد کے ساتھ بیلاروس سے مصنوعات درآمد کی گئی ہیں۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 12 =