1 اپریل، 2020 4:08 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 83735492
0 Persons
ایران میں "یوم فطرت" پچھلے سالوں سے بہت مختلف منایا گیا

تہران، ارنا- ایران میں یوم فطرت کے موقع پر عوام نے دن کو قدرتی ماحول میں گزارنے کے بجائے گھر کے اندر ہی رہنے سے اپنے ہم وطنوں کی صحت کے تحفظ کا خیال رکھتے ہوئے ایک دوسرے سے یکجہتی کا مظاہرہ کیا۔

ایران میں یکم آپریل (تیرہ فروردین) مطابق یوم فطرت ہے جسے ملک بھر میں "سیزدہ بدر" کہا جاتا ہے۔

یوم فطرت ایران میں در اصل جشن نوروز کی الوداعی تقریب ہے لیکن اس سال ایران میں بن بُلائے مہمان کرونا وائرس کی آمد کی وجہ سے یوم فطرت مختلف طریقے سے منایا گیا اور ایرانیوں نے گھر کے اندر ہی میں دن کو گزارا۔

اس سال میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کی وجہ سے ایرانی حکام اور عہدیداروں نے عوام کو گھر ہی میں یوم فطرت منانے کی تجویز دی۔

ایران کے تمام چھوٹے بڑے شہروں سے موصول رپورٹس کے مطابق ایرانی عوام نے اسی دن کے موقع پر حفاظتی تدابیر کا خیال رکھتے ہوئے کرونا وائرس کی روک تھام کی کوششوں کے سلسلے میں پارکوں اور قدرتی ماحول کی سیر کرانے کے بجائے گھر ہی میں گزارا۔

ویسے بہت سے ایرانی عوام، ان دنوں کے دوران میں اسمارٹ فون کے ذریعے اپنے دیگر رشتہ داروں سے تعلقات قائم کرتے ہوئے ان سے بات چیت کر رہے ہیں۔

واضح رہے کہ ایرانی محکمہ صحت کے شعبہ تعلقات عامہ کے سربراہ "کیانوش جہانپور" کے مطابق اب تک ملک میں مجموعی طور پر 47539 کرونا وائرس کا شکار ہوگئے ہیں جن میں سے 3036 افراد کا انتقال ہوگئے ہیں جبکہ 15473 متاثرہ افراد بھی صحت یاب ہوگئے ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 2 =