یوم ارض فلسطین کی مناسبت سے ایرانی محکمہ خارجہ کا بیان جاری

تہران، ارنا- ایرانی محکمہ خارجہ نے یوم ارض فلسطین کے موقع پر ایک بیان میں اپنی سرزمین کے دفاع پر فلسطینی بہادر عوام کی جہد و جد اور ان کی مثالی صبر و مزاحمت کو سراہا۔

تفصیلات کے مطابق ایرانی محکمہ خارجہ کے بیان میں کہا گیا ہے کہ آج 30 مارچ مطابق یوم ارض فلسطین ہے وہ دن جو تاریخ میں فلسطینی عوام کی جد و جہد اور قابض صہیونی ریاست کیخلاف مقبوضہ فلسطین کےعوام کی مزاحمت کی یاد دہانی کرتا ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کا یقین ہے کہ علاقے میں پائیدار اور انصاف پر مبنی قیام امن صرف فلسطینی سرزمین پر ناجائز صہیونی ریاست کے خاتمے، تمام فلسطینی پناہ گزینوں کی اپنی آبائی وطن کی واپسی، استصواب رائے کے ذریعے فلسطینی عوام کی خواست کے مطابق ان کی سرزمین کے مستقبل کے فیصلے اور فلسطینی حکومت کی تشکیل جس کا دارالحکومت بیت المقدس ہو، سے فراہم ہوجائے گا۔

ایرانی محکمہ خارجہ کے بیان میں فلسطین میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے پیش نظر ناجائر صہیونی ریاست کی جیلوں میں تمام فلسطینی قیدیوں کی جلد از جلد رہایی، غزہ پٹی کی ناکہ بندی کے اختتام اور مقبوضہ فلسطین میں طبی و انسانہ دوستانہ امداد کی ترسیل پر زور دیا گیا ہے۔

 یہ بات قابل ذکر ہے کہ آج بروز 30 مارچ 2020 فلسطین بھر میں یوم ارض کی 44 ویں سالگرہ منائی جا رہی ہے۔

 44 سال قبل مقبوضہ فلسطین سے جلاوطن ہونے والے مقامی فلسطینیوں نے غاصب صہیونی ریاست کے خلاف وطن واپسی کیلئے تحریک کا آغاز کیا تھا۔

یاد رہے 30 مارچ 1976ء کے دن صہیونی غاصبوں نے مقبوضہ فلسطین کے شمال میں واقع الجلیل خطے کی ہزاروں ایکڑ زمین پر زبردستی قبضہ جمانے کے بعد وہاں مقیم فلسطینیوں کو نقل مکانی پر مجبور کر دیا تھا۔ اس مجرمانہ اقدام کے بعد فلسطینی عوام نے احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ شروع کر دیا تھا، لہذا 30 مارچ کو پورے فلسطین میں یوم احتجاج کے طور پر منایا جاتا ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 15 =