ایرانی سفیر کا برطانوی میڈیا سے امریکی پابندیوں کی منسوخی مہم میں حصہ لینے کا مطالبہ

لندن، ارنا- برطانیہ میں تعینات اسلامی جمہوریہ ایران کے سفیر نے دنیا میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے خطرات پر تبصرہ کرتے ہوئے برطانوی ذرائع ابلاغ سے مطالبہ کیا کہ وہ بھی امریکی پابندیوں کو نظر انداز کرنے کی مہم میں حصہ لیں۔

 ان خیالات کا اظہار "حمید بعیدی نژاد" نے بدھ کے روز ایک ٹوئٹر پیغام میں کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ کی وجہ سے برطانوی ذرائع ابلاغ کیساتھ اجلاس کے انعقاد کے عدم امکان کے پیش نظر میں نے ایک مراسلے کے ذریعے ان سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنے انسانی فرائض پر عمل کرتے ہوئے دنیا کو ایران مخالف امریکی پابندیوں کے بُرے اثرات اور ایرانی معاشی اور طبی وسائل کو محدود کرنے سے اطلاع دینے سمیت ایران مخالف امریکی پابندیوں کو اٹھانے کا مطالبہ کریں۔

 واضح رہے کہ ایرانی سفیر نے مختلف عرصوں کے دوران برطانوی ذرائع ابلاغ سے اجلاس کا انعقاد کرتے ہوئے ان سے باہمی اور بین الاقوامی مسائل پر تبادلہ خیال کیا ہے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ امریکی وزارت خزانہ نے کرونا وائرس کے پھیلاؤ کیساتھ ایران اور پاکستان کے جوہری سرگرمیوں میں تعاون کے بہانے سے 24 افراد بشمول اسلامی جمہوریہ ایران کے حکام کیخلاف پابندیاں عائد کیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ دوسالوں کے دوران ایرانی عوام، امریکہ کیجانب سے لگائی گئی انتہائی ظالمانہ اور انسانی سوز پابندیوں کا شکار ہیں اور امریکی دعووں کے برعکس طبی اور ادویات کی سہولیات کی فراہمی میں ان کو بہت بڑی مشکلات کا سامنا ہے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ ایرانی محکمہ صحت کے مطابق اب تک ملک کے اندر 17 ہزار 361 افراد کرونا وائرس میں مبتلا ہوگئے ہیں جن میں سے 1135 افردا کا انتقال ہوگئے اور 5 ہزار 710 افراد بھی صحت یاب ہوگئے ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 5 =