ایرانی اسپیکر کا کورونا وائرس کے مقابلے کیلئے علاقائی مشاورت

تہران، ارنا – ایرانی پارلیمنٹ (مجلس) کے اسپیکر نے اپنے کویتی اور عمانی ہم منصبوں کے ساتھ الگ الگ ٹیلی فونک رابطوں کے دوران کورونا وائرس کے خلاف کئے گئے اقدامات پر تبادلہ خیال کیا۔

ایرانی اسپیکر "علی لاریجانی" نے منگل کے روز اپنے کویتی اور عمانی ہم منصبوں "مرزوق الغانم اور خالد المعمولی" کے ساتھ الگ الگ ٹیلی فونک رابطوں میں کورونا وائرس کی روک تھام پر گفتگو کی۔
انہوں نے اسلامی جمہوریہ ایران کی جانب سے اس وائرس کے خلاف کئے گئے اقدامات کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے علاقائی باہمی تعاون اور تجربات کے تبادلے کی ضرورت ہے۔
لاریجانی نے علاقے میں نئی تبدیلیوں اور بحرانوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اسلامی ممالک کے درمیان سیاسی مذاکرات اور گفتگو کا تسلسل لازمی ہے۔
کویتی اسپیکر مرزوق الغانم نے کورونا وائرس سے نمٹنے کے لئے اپنے ملک کی تیاری پر زور دیا اور کہا کہ پڑوسی ممالک کے درمیان سامان کی فراہمی اور وسیع تعاون اس وائرس کے خاتمے کے لئے مدد کرتی ہے۔
عمانی اسپیکر خالد المعمولی نے علاقائی تبدیلیوں، امن کو جاری رکھنے اور پائیدار استحکام کے لئے دونوں ممالک کے مسلسل مذاکرات پر زور دیا اور کہا کہ کورونا وائرس کی روک تھام کے مقصد سے باہمی تعاون کی ضرورت ہے۔
یاد رہے کہ چین کے سب سے زیادہ آبادی والے شہر ووہان میں دسمبر 2019 کے آخر میں نئے کورونا وائرس (2019-nCoV) کا وباء ریکارڈ کیا گیا۔
ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن نے اسے بین الاقوامی تناسب کی ہنگامی صورتحال کے طور پر تسلیم کیا ، اور اسے متعدد مقامات پر مشتمل ایک وبا کے طور پر بیان کیا ہے۔
چین کے باہر ، ایران سمیت 58 ممالک میں انفیکشن کا پتہ چلا۔
تفصیلات کے مطابق، اسلامی جمہوریہ ایران کے اندر مجموعی طور پر 7161 افراد کرونا وائرس کا شکار ہوگئے ہیں جن میں سے 237 افراد جاں بحق ہوگئے ہیں اور 2394 افراد کا علاج بھی ہوچکے ہیں۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 10 =