ایرانی سرحدوں میں کورونا وائرس کیخلاف اقدامات کا آغاز

تہران، ارنا – ایرانی سرحدی پولیس کے ڈپٹی کمانڈر جنرل نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے یونیورسٹی آف ایران میڈیکل سائنسز کے تعاون سے سرحدی دروازوں اور چوکیوں پر اقدامات اٹھائے گئے ہیں۔

جنرل احمد علی گودرزی نے ایک بیان میں کہا کہ ہم نے کورونا وائرس پر قابو پانے کے لئے اپنے ملک کے سرحدی دروازوں اور چوکیوں پر یونیورسٹی آف میڈیکل سائنسز کے تعاون سے حفاظتی اقدامات شروع کیے ہیں۔
انہوں نے سرحدوں پر کورونا کے خلاف اقدامات اٹھانے کی اہمیت کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ اس وائرس سے مقابلہ کرنے کے لئے کتابچے کی تقسیم ، ڈس انفیکشن اور مقامات اور سہولیات کی سنگاری جیسے عمل کو عملی جامہ پہنایا گیا ہے۔
انہوں نے سرحدی محافظوں کی شاخوں کے لئے جراثیم کشی کے سامان مختص کیے جانے کی نشاندہی کرتے ہوئے کہا کہ صوبوں میں صحت مراکز میں سنگرودھ کمرے موجود ہیں ، اور کورونا بیماری کی تشخیص اور پتہ لگانے کے لئے لیزر بخار کی پیمائش کا آلہ تیار کیا گیا تھا اور یہ سرحدی محافظ تربیت کے محکمہ کو پہنچایا گیا تھا۔
ایرانی محکمہ صحت کے شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق، اب تک ایران میں کورنا وائرس سے 1500 متاثرہ لوگوں میں سے 66 افراد جاں بحق ہو گئے ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
9 + 7 =