کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے ایران سے رابطے میں ہیں: پاکستان

اسلام آباد، ارنا- پاکستانی محکمہ خارجہ کی خاتون ترجمان نے کرونا وائرس کیخلاف ایران کی حکمت عملیوں اور کوششوں کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان اس وائرس کے پھیلاؤ کی روک تھام کیلئے ایران کیساتھ  بدستور رابطے میں ہے۔

ان خیالات کا اظہار "عایشہ فاروقی" نے جمعرات کے روز اسلام آباد میں ملکی اور غیر ملکی صحافیوں کیساتھ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا۔

انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان، کرونا وائرس کیخلاف مقابلے کرنے کی ایرانی کوششوں کی بھر پور حمایت کرتا ہے۔

پاکستانی ترجمان نے ایرانی حکومت اورعوام کیساتھ یکجہتی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ کرونا وائرس کے پھیلاو کی روک تھام کیلئے پاکستان کے صوبائی اور سرکاری حکام اپنے ایرانی ہم منصبوں کیساتھ باقاعدہ طور پر رابطے میں ہیں۔

فاروقی نے مزید کہا کہ پاکستانی وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت کے امور نے بھی تفتان بارڈز اور باہمی سرحدی علاقوں کا دورہ کیا ہے اورساتھ ہی ایران میں قائم پاکستانی سفارتخانے اور مشہد و زاہدان میں پاکستانی قونصول خانے بھی ایران میں کرونا وائرس کے پھیلاؤ کی صورتحال کا جائزہ لے رہے ہیں۔

انہوں نے اس بات پر زوردیا کہ ایران میں تعینات پاکستانی سفارتکاروں نے ایران میں مقیم پاکستانی شہری، طلباء اور زائرین کی صحت کے تحفظ کیلئے کسی بھی کوشش سے دریغ نہیں کیا ہے۔

پاکستانی ترجمان نے کہا کہ اسلام آباد نے ابھی دونوں ملکوں کے درمیان، پروازوں کی معطلی کیلئے کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے لیکن ہم پاکستانی شہریوں کی صحت کے تحفظ کیلئے ضروری کسی بھی کوشش سے دریغ نہیں کریں گے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ پاکستانی محکمہ صحت نے گزشتہ روز کہا ہے کہ پاکستان میں 2 افراد کرونا وائرس کا شکار ہوگئے ہیں۔

جس کے بعد حکومت پاکستان نے صوبے بلوچستان سمیت ملک کے بعض شمالی اور جنوبی علاقوں میں اسکولوں کو بند کیا گیا ہے اور مختلف شہروں اور سرحدی بارڈز پر حفاظتی تدابیر اتخاذ کیے ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 0 =