ایران کی غزہ پٹی کیخلاف صہیونی ریاست کے حالیہ حملے کی مذمت

تہران، ارنا- ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے غزہ کی پٹی اور دمشق میں نہتے عوام اور مزاحمتی فرنٹ کیخلاف ناجائز صہیونی ریاست کے دہشتگردانہ حملوں کی سختی سے مذمت کی۔

سید "عباس موسوی" نے ناجائز صہیونی ریاست کیجانب سے فلسطینی شہید کے جسد خاکی کی توہین اور بے حرمتی کو صہیونیوں کے سفاکانہ اور غیر انسانی اقدامات کی علامت قرار دے دیا۔

انہوں نے کہا کہ اس بات سے یہ ظاہر ہوتی ہے کہ وہ بے پناہ اور نہتے فلسطینی عوام کے کم سے کم انسانی اور اخلاقی حقوق پر بھی عمل پیرا نہیں ہیں۔

موسوی نے عالمی عدالت انصاف میں ناجائز صہیونی ریاست کے ان اقدمات کے قانونی تعاقب کرنے کی ضرورت سمیت ان کو بطور سنگین جرائم کرنے والے کے سزا دینے کی ضرورت پر زور دیا۔

انہوں نے ناجائز صہیونی ریاست کیخلاف فلسطینی عوام کی جد و جہد کو سراہتے ہوئے مزاحمت اور قومی یکجہتی کو اس ریاست کیخلاف مقابلہ کرنے کا واحد طریقہ قرار دے دیا۔

موسوی نے ناجائز صہیونی ریاست کے مسلسل سنگین جرائم کے سامنی بین الاقوامی برادری اور بعض ہمسایہ ممالک کی لاپروائی اور خاموشی پر افسوس کا اظہار کردیا۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ غزہ کی پٹی کے شہر خان یونس میں صیہونی فوجیوں نے فائرنگ کر کے ایک فلسطینی نوجوان کو شہید کردیا اور پھر اس کے جسد خاکی کو ایک بڑے کرین کے ذریعے دوسری جگہ منتقل کیا۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 3 =