ایران عمان تجارتی تعلقات کے حجم کی سطح ایک ارب ڈالر سے تجاوز کر گئی

تہران، ارنا-  ایران اور عمان کے مشترکہ ایوان تجارت کے سربراہ نے کہا ہے کہ دونوں ملکوں کے در میان تجارتی تعلقات کے حجم کی سطح میں قابل قدر اضافہ ہوکر ایک ارب 163 ملین ڈالر تک پہنچ گئی ہے۔

ان خیالات کا اظہار "محسن ضرابی" نے آج بروز پیر کو کان کنی کے شعبے میں ایران اور عمان کے درمیان صلاحیتوں سے متعلق منعقدہ ایک اجلاس کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا گزشتہ 6 سالوں پہلے دونوں ملکوں کے درمیان تجارتی تعلقات کے حجم کی شرح 146 ملین ڈالر کی تھی جس میں قابل قدر اضافے کیساتھ اب ایک ارب 163 ملین ڈالر تک پہنچ گئی ہے۔

ضرابی نے کہا کہ گزشتہ سالوں کے دوران، بینادی ڈھانچوں کی عدم فراہمی کی بنا پر دونوں ملکوں کے تعاون کی راہ میں رکاوٹیں حائل ہوئی تھیں لیکن اب اس حوالے سے ضروری انفراسٹکچر کی فراہمی ہوگئی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ عمان 50 لاکھ کی آبادی پر مشتمل ایک ملک ہے جو بندرگاہوں کی تعداد کے لحاظ سے مشرق وسطی کی تیسری پوزیشن پر کھڑا ہے۔

ایران اور عمان کے مشترکہ ایوان تجارت کے سربراہ نے کہا کہ عمان کے معاشی شعبے میں کان کنی کو پہلی پوزیشن حاصل ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایران اور عمان کے درمیان اچھے سیاسی تعلقات قائم ہیں اور ہماری کوشش یہ ہے کہ دونوں ملکوں کے درمیان اقتصادی تعلقات میں مزید اضافہ ہوجائے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 1 =