ایرانی سمندری نقل و حمل کی گنجائش میں 5۔12 ملین ٹن کا اضافہ

تہران، ارنا- اسلامی جمہوریہ ایران کی پورٹس اینڈ شپنگ اتھارٹی کے نائب سربراہ نے کہا ہے کہ ملک کی سمندری نقل و حمل کی سالانہ گنجائش میں 5۔12 ملین ٹن کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

ان خیالات کا اظہار "جلیل اسلامی" نے آج بروز پیر کو سمندری شعبے میں موجود اداروں کے درمیان ہم آہنگی سے متعلق منعقدہ  27 ویں سمینار کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کیخلاف شدید پابندیوں کے باجود لیکن رواں سال کے دوران ملک کی سمندری نقل و حمل کی گنجائش میں قابل قدر اضافہ ہوکر 5۔12 ملین ٹن تک پہنچ گئی۔

اسلامی نے مزید کہا کہ رواں سال کے دوران 14 ملین کیوبک میٹر پر مشتمل چینلوں اور بنادرگاہوں سے منسلک راستوں کی ڈریجنگ کی گئی جو سمندری نقل و حمل کی صنعت کے فروغ میں مددگار ثابت ہوسکتا ہے۔

ایران کی پورٹس اینڈ شپنگ اتھارٹی کے نائب سربراہ کے مطابق رواں سال کے دوران 16 ملین افراد نے ایرانی سمندروں کے ذریعے سفر کیا ہے۔

اسلامی نے مزید کہا کہ ایران مخالف پابندیوں کی وجہ سے سمندری کے شعبے میں خدمات اور سہولیات تک عدم رسائی کی وجہ سے ہم نے بحری جہازوں کی تعمیر کیلئے ملک کی اندرونی صلاحیتوں کو بروئے کار لانے کا فیصلہ کیا ہے۔

 یہ بات قابل ذکر ہے کہ ایران میں سمندری شعبے میں موجود اداروں کے درمیان ہم آہنگی سے متعلق منعقدہ  27 ویں سمینار کا انعقاد کیا گیا جس میں ایرانی وزیر برائے موصلات اور شہری ترقی نے حصہ لیا تھا۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 0 =