12 فروری، 2020 6:12 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 83672616
0 Persons
 ایرانی برآمدات، درآمدات سے 4 گنا زیادہ ہے

گرگان، ارنا- ایرانی کسٹم کے سربراہ نے کہا ہے کہ ایران مخالف امریکی پابندیوں اور ملک کیخلاف زیادہ سے زیادہ معاشی دباؤ کے باوجود پھر بھی اسلامی جمہوریہ ایران کی برآمدات، درآمدات سے 4 گنا زیادہ ہے۔

ان خیالات کا اظہار سید "مہد ی اشرفی" نے بدھ کے روز شمالی صوبے گلستان میں کسٹم ادارہ کی نئی عمارت کی افتتاحی تقریب میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایران نے رواں سال سے اب تک 115 ملین ٹن مختلف قسم کی مصنوعات کو دیگر ممالک میں برآمد کیا ہے۔

اشر فی نے مزید کہا کہ اسی عرصے کے دوران ایران نے 19 ملین ٹن مصنوعات کی درآمدات کی ہیں جو زیادہ تر ادویات اور ضروری مصنوعات پر مشتمل تھیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ رواں مہینے کے 15 ابتدائی دنوں کے دوران بھی 3 ملین ٹن مصنوعات ملک میں درآمدات ہوئی ہیں جو زیادہ تر ادویات اور دیگر ضروری مصنوعات پر مشتمل تھیں۔

اشرفی نے صوبے گلستان اور ترکمانستان کے درمیان مشترکہ سرحدوں پر تبصرہ کرتے ہوئے اس صوبے سے مصنوعات کے ٹرانزٹ میں اضافے پر زور دیا۔

انہوں نے یوریشین اقتصادی یونین میں ایران کی شمولیت کو ملک کی مصنوعات کی برآمدات کے اضافے میں موثر قرار دے دیا۔

ایرانی کسٹم کے مطابق، اسلامی جمہوریہ ایران اور یوریشین یونین کے درمیان آزاد تجارت کے عبوری معاہدے کا 27 اکتوبر سے آغاز کیا گیا۔

اس معاہدے کے نفاذ کے ایک سال بعد، ایران اور یوریشن رکن ممالک کیساتھ آزادانہ تجارت کے انتظامات کیے جائیں گے۔

اس عبوری تجارتی معاہدے میں 862 کی مختلف قسم مصنوعات شامل ہیں جن میں سے 360 قسم کی مصنوعات کو ایران سے یوریشن یونین میں برآمدات کی جاتی ہے اور باقی 502 قسم کی مصنوعات کو یوریشین یونین سے ایران میں برآمد ہوجائے گی۔

فی الحال، روس، بیلاروس، قازقستان، آرمینیا اور کرغزستان یوریشین یونین کے پانچ ممبر ہیں لیکن اس یونین نے 40 سے زیادہ ممالک اور بین الاقوامی تنظیموں کے ساتھ کام کرنے کیلئے اپنی آمادگی کا اظہار کرلیا ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 2 =