پاکستانی عوام کی شیطانی "صدی کی ڈیل" کیخلاف احتجاجی ریلیاں

اسلام آباد، ارنا – پاکستانی مسلمانوں ںے نماز جمعہ کے بعد ڈونلڈ ٹرمپ کی شیطانی سازش "صدی کی ڈیل" کے خلاف احتجاجی ریلیوں میں امریکہ اور ناجائز صہیونی ریاست سے اپنی نفرت کا اظہار کیا.

پاکستانی عوام نے جمعہ کے روز سیاسی اور مذہبی جماعتوں کے ساتھ مظلوم فلسطینی قوم سے اظہار یکجہتی کے لئے ایک احتجاجی ریلیاں نکال کردیا۔
پاکستان کے شہر کراچی میں نمازیوں نے ٹرمپ کے امن منصوبے کے خلاف اجتماع کرکے "صدی کی ڈیل" شیطانی سازش کی مذمت کی.
مظاہرین نے امریکہ اور ناجائز صہیونی ریاست کے خلاف نعرے لگاتے ہوئے صدی کی ڈیل کو انسانی حقوق کی کھلی خلاف ورزی قرار دے دیا.
انہوں نے بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر فلسطینی عوام کی حمایت میں نعرے درج تھے اور امت مسلمہ سے امریکہ اور غاصب صیہونیوں کے مذموم منصوبوں سے مقابلہ کرنے کا مطالبہ کیا.


منعقدہ ریلیوں میں "امریکہ مردہ باد" کے نعروں کے علاوہ امریکہ اور ناجائز صہیونی ریاست کے پرچموں کو جلا دیا گیا.
انہوں نے کہا کہ پاکستانی قوم دوسرے اسلامی قوموں کے ساتھ مل کر فلسطینی مظلوم عوام کے ساتھ کھڑے رہے گی اور مقبوضہ فلسطین کے خلاف صہیونیوں، امریکہ اور بعض عرب ممالک کے غیرانسانی اقدامات کو بھول نہیں کریں گی.
تفصیلات کے مطابق، پاکستانی وزارت خارجہ نے بدھ کے روز امریکہ کے صدی کی ڈیل منصوبے پر اپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پاکستانی حکومت القدس شریف کے دارالخلافے کے تحت فلسطین کی خودمختار حکومت کی تشکیل کی حمایت کر رہی ہے.
یہ بات قابل ذکر ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ناجائر صہیونی ریاست کے وزیراعظم نیتن یاہو کے ساتھ وائٹ ہاؤس میں مشترکہ پریس کانفرنس میں مشرق وسطٰی میں قیام امن کے لیے اپنا منصوبہ پیش کیا۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
9 + 9 =