16 جنوری، 2020 10:31 AM
Journalist ID: 1917
News Code: 83636132
0 Persons
ایران جوہری معاہدہ، یورپ اپنا قبلہ درست کرے: ظریف

تہران، ارنا - ایرانی وزیر خارجہ نے جوہری معاہدے سے متعلق یورپی فریقین کی وعدہ خلافیوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا ہے کہ یورپ کو ایران اور نیوکلیر ڈیل پر اپنا رویہ ٹھیک کرنا ہوگا.

انہوں نے ان تین یورپی ممالک سے ایران اور جوہری معاہدے سے متعلق اپنے برتاؤ کو سدھارنے کا مطالبہ کیا۔

ان خیالات کا اظہار "محمد جواد ظریف" نے بھارت میں منعقدہ رائے سینا ڈائیلاگ فورم کے موقع پر یورپی یونین کے اعلی نمائندے برائے خارجہ پالیسی "جوزف برول" سے ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے جورف بورل کو نئے عہدہ سنبھالنے پر مبارکباد دی اور ان سے قریبی تعاون پر آمادگی کا اظہار کردیا۔

 یہ بات قابل ذکر ہے کہ ظریف نے گزشتہ روز بھی ایک پیغام میں کہا کہ ایران جوہری معاہدے کیخلاف امریکی اقدامات پر یورپی فریقین کا جواب ایران سے تجارتی تعلقات کو منقطع کرنے اور ساتھ ساتھ ایرانی تیل کیخلاف پابندیاں لگانے کا ہے۔

ظریف نے بھارت میں منعقدہ رائے سینا ڈائیلاگ فورم میں گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ افسوس کی بات ہے کہ دنیا کی سب سے بڑی اقتصادی طاقت، جبر کے تحت اپنے وعدوں کی خلاف وزی کر رہی ہے۔

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ جوہری معاہدے کا مستقبل تین یورپی فریقین کے اقدامات پر منسلک ہے نہ کہ ایران۔

 یہ بات قابل ذکر ہے کہ برطانیہ، فرانس اور جرمنی کے وزرائے خارجہ نے حالیہ دونوں میں مشترکہ بیان میں تنازع کے حل کے میکنزم کے کھولنے کا اعلان کیا اور کہا کہ یورپی ممالک اب بھی جوہری معاہدے پر عمل درآمد کے خواہش مند ہیں۔

دوسری جانب ایران نے یورپی بیان کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر یورپی ممالک اس عمل کا ناجائز استعمال چاہتے ہیں تو پھر وہ نتائج بھگتنے کے لئے بھی تیار رہیں.

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 5 =