13 جنوری، 2020 4:03 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 83632596
0 Persons
ظریف بھارتی فورم رائے سینا ڈائیلاگ میں شریک ہوں گے

دہلی نو، ارنا- رائے سینا دائیلاگ فورم کی بین الاقوامی  کانفرنس کا 14 سے 16 جنوری تک بھارتی دارالحکومت دہلی میں انعقاد کیا جائے گا جس میں مختلف ممالک کے وزرائے خارجہ بشمول "محمد جواد ظریف" حصہ لیں گے۔

بھارتی ذرائع ابلاغ کے مطابق آسٹریلیا کے وزیر اعظم "سکاٹ موریسون" جو اس کانفرنس کے میں لکچرر ہیں، کے علاوہ  بھارت، اسلامی جمہوریہ ایران، روس، مراکش، مالدیپ، بھوٹان، آسٹریلیا، جنوبی افریقہ، جمہوریہ چیک، ڈنمارک، ایسٹونیا اور ازبکستان کے وزرائے خارجہ حصہ لیں گے۔

 واضح رہے کہ رائے سینا ڈائیلاگ ایک کثیر ملکی کانفرنس ہے جو ہر سال نئی دہلی میں انعقاد کیا جاتا ہے۔

اس کانفرنس میں بین الاقوامی برادری کو در پیش مشکل ترین مسائل کا جائزہ لیا جاتا ہے اور المی سیاسی، کاروباری، میڈیا اور سول سوسائٹی کے رہنما اس میں حصہ لیں گے تا کہ بین الاقوامی پالیسی کے وسیع معاملات پر تعاون سے متعلق مذاکرات کریں۔

رائے سینا ڈائیلاگ کا ابزور ریسرچ فاونڈیشن اور بھارتی حکومت اور محکمہ خارجہ کی زیر اہتمام میں انعقاد کیا جاتا ہے۔

اس سال کی گفتگو کا عنوان "الفا صدی اسکرول" ہے جو ایک کثیر الجہتی اور متنازعہ بحث ہے جس میں مختلف ملکوں کے رہنماؤں، کابینہ کے وزراء ، سرکاری عہدیداروں کے ساتھ ساتھ نجی شعبے کے اعلی عہدیداران، میڈیا اور اکیڈمیا کے ممبران شرکت کریں گے۔

رائے سینا ڈائیلاگ فورم میں ایرانی وزیر خارجہ کی شرکت

محمد جواد ظریف 14 جنوری کو بھارتی ریسرچ فاونڈیشن کے سربراہ "سمیر ساران" کیساتھ ایک مشترکہ ڈائیلاگ میں حصہ لیں گے۔

 اس کے علاوہ ایرانی محکمہ خارجہ میں سیاسی اور بین الاقوامی علوم کے مرکز کے سربراہ "سید محمد کاظم سجاد پور" بھی ظریف کے بعد اس اجلاس میں تقریر کریں گے۔

"دکان ہرالد" جریدے کے مطابق رائے سینا ڈائیلاگ فورم، ایران اور امریکہ کے درمیان حالیہ کشیدکی سے متعلق بات چیت کرنے کیلئے ظریف کا ایک اہم موقع ہے۔

 اس کانفرس کے موقع پر ایرانی وزیر خارجہ اور ان کے بھارتی ہم منصب کیساتھ ملاقات کا امکان بھی ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
7 + 10 =