6 جنوری، 2020 11:40 AM
Journalist ID: 2392
News Code: 83623019
0 Persons
جوہری معاہدے کے تحت آخری مرحلے کا فیصلہ اٹھایا: ظریف

تہران، ارنا - ایرانی وزیر خارجہ نے ایک ٹوئٹر پیغام میں کہا ہے کہ ماضی کی طرح وعدوں میں کمی لانے سے متعلق پانچویں فیصلے کو بھی جوہری معاہدے کے تحت اٹھایا گیا ہے.

یہ بات "محمد جواد ظریف" نے اتوار کے روز اپنے ٹوئٹر پیج میں کہی.
انہوں نے ایران کے جوہری وعدوں کی کمی کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس مرحلے اور جوہری معاہدے کی شق نمبر 36 کے مطابق، ہم سینٹریفیوجز کی تعداد میں کسی حدود کا پابند نہیں ہوں گے.
ظریف نے کہا کہ ہمارے فیصلہ جوہری معاہدے کے فریم ورک کی مبنی پر ہے اور اس معاہدے پر مکمل عملدرآمد کرنے کے ساتھ تمام مراحل قابل واپسی ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ ہم عالمی جوہری ادارے کے ساتھ تعاون کو جاری رکھیں گے.
تفصیلات کے مطابق، حکومت اسلامی جمہوریہ ایران نے جوہری معاہدے میں اپنے وعدوں میں کمی لانے سے متعلق پانچواں فیصلہ کرتے ہوئے یہ اعلان کیا ہے کہ اب ایران یورینیم کی افزودگی، ذخیرہ شدہ یورینیم کی مقدار کے ساتھ اپنی جوہری سرگرمیوں میں کسی حدود کا پابند نہیں ہے.
اس بیان کے مطابق، ایران افزودگی کی صلاحیت ، افزودگی کی سطح ، افزودہ مواد ، ترقی اور تحقیق کی مقدار جو 2015 میں دستخط شدہ جامع مشترکہ ایکشن پلان میں طے شدہ ہے، پر پابندیوں کا خاتمہ کرے گا۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 1 =