6 جنوری، 2020 9:43 AM
Journalist ID: 2393
News Code: 83622778
0 Persons
پاکستانی وزیر ہوابازی کی جنرل سلیمانی کے قتل کی مذمت

اسلام آباد، ارنا – پاکستانی وزیر ہوابازی نے امریکہ کے دہشتگردی حملے میں جنرل سلیمانی کے قتل کی سختی سے مذمت کرتے ہوئے کہا کہ امریکی اس اقدام نے خطی صورتحال کو خطرناک بنا دیا ہے۔

پاکستانی میڈیا کے مطابق، غلام سرورخان نے پیر کے روز راولپنڈی میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے کہا کہ خلیج فارس میں کشیدگی میں اضافہ تشویشناک ہے کیونکہ اس کے پاکستان کے سنگین نتائج برآمد ہوں گے۔

غلام سرورخان نے اس واقعے پر ایران اور امریکہ سے صبر و تحمل کے مظاہرہ کرنے کا مطالبہ کیا.

یاد رہے کہ پاکستانی وزارت خارجہ نے جمعہ کے روز جنرل سلیمانی کی شہادت کے کچھ گھنٹے بعد خطی کی موجودہ صورتحال پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کسی یکطرفہ اور جارحانہ کارروائی سے گریز کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

پاکستانی وزیر خارجہ شاه محمود قریشی نے بھی اتوار کے روز محمد جواد ظریف کے ساتھ ٹیلی فونک رابطے میں خطے کے حالیہ تبدیلیوں پر تبادلہ خیال کیا.

یاد رہے کہ جمعہ کی علی الصبح کو عراق کے دارالحکومت بغداد کے ایئرپورٹ پر امریکہ کی جانب سے راکٹ حملے کیے گئے جس کے نتیجے میں پاسداران انقلاب کے کمانڈر قدس جنرل قاسم سلیمانی سمیت عراق کی عوامی رضاکار فورس الحشد الشعبی کے ڈپٹی کمانڈر "ابومهدی المهندس" شہید ہوگئے۔

ایرانی دارالحکومت تہران میں پاسداران انقلاب کے کمانڈر قدس فورس شہید جنرل قاسم سلیمانی اور ان کے ساتھیوں کے جنازے کا آج آغاز ہوگیا ہے جنہیں الوداع کرنے کے لئے لاکھوں ایرانی امڈ آئے.

ایرانی قائد اسلامی انقلاب آیت اللہ العظمی "سید علی خامنہ ای" شہید قاسم سلیمانی اور ان کے ساتھیوں کے جسم خاکی پر نماز جنازہ ادا کیا.

شہید قاسم سلیمانی کے جسم خاکی کو منگل کے روز اپنے آبائی علاقے صوبے کرمان میں سپرد خاک کیا جائے گا.

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 0 =