5 جنوری، 2020 8:24 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 83622400
0 Persons
ایران میں جرمن ناظم الامور کی طلبی

تہران، ارنا - امریکہ کی دہشتگرد کاروائی میں جنرل سلیمانی کی شہادت پر بعض جرمن حکام کے نامعقول بیانات کے بعد ایران نے جرمن ناظم الامور کو طلب کرکے اپنا شدید احتجاج ریکارڈ کرادیا.

تہران میں جرمن سفیر کی غیرموجودگی پر دفترخارجہ نے ان کے ناظم الامور کو طلب کرکے غیرسنجیدہ بیانات پر شدید احتجاج کیا.

اس موقع پر ایرانی محکمہ خارجہ میں تعینات مغربی یورپ کے سربراہ نے مغربی ایشیا میں قیام امن و سلامتی سے متعلق  قدس فورس کے اعلی کمانڈر جنرل قاسم سلیمانی کے تعیمری کردار کا ذکر کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ شہید جنرل قسم سلیمانی کو نہ صرف ایران بلکہ دنیا اورعلاقے میں داعش دہشتگرد گروپ کیخلاف جنگ کے ہیرو سمجھا جاتا ہے اسی مناسبت سے، ایسے یکطرفہ اور ناقابل قبول بیانات ایک طرف دونوں ممالک کے روایتی تعاون اور دوسری طرف علاقائی استحکام اور سلامتی کے منافی ہیں۔

اس موقع پر جرمنی ناظم الامور نے کہا کہ وہ اسلامی جمہوریہ ایران کے مطالبات کو فوری طور امریکی حکام تک پہنچادیں گے اور ایرانی حکومت کو اس کے نتیجے سے آگاہ کریں گے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ جمعہ کی علی الصبح کو عراق کے دارالحکومت بغداد کے ایئرپورٹ پر امریکہ کی جانب سے راکٹ حملے کیے گئے جس کے نتیجے میں پاسداران انقلاب  کے کمانڈر قدس جنرل قاسم سلیمانی سمیت عراق کی عوامی رضاکار فورس الحشد الشعبی کے ڈپٹی کمانڈر "ابومهدی المهندس" شہید ہوگئے۔

شہید جنرل قاسم سلیمانی کے جسد خاکی کو مشہد الرضا میں حرم رضوی میں تشییع اور طواف کے بعد تہران منتقل کیا جائےگا۔ منگل کے روز شہید قاسم سلیمانی کو ان کے آبائی علاقے صوبے کرمان میں سپرد خاک کیا جائےگا۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 2 =