4 جنوری، 2020 7:18 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 83620751
0 Persons
امریکہ کو بھاری قیمت چکانی پڑ ے گی: صدر روحانی

تہران، ارنا - صدر اسلامی جمہوریہ ایران نے کہا ہے کہ جنرل سلیمانی کی شہادت سے ہماری قوم مزید پُرعزم اور طاقتور ہوئی ہے تاہم امریکہ کو اس بزدلانہ اقدام پر بھاری قیمت چکانی پڑے گی.

تفصیلات کے مطابق ڈاکٹر حسن روحانی نے آج بروز ہفتہ کو نائب قطری وزیر اعظم اور وزیر خارجہ "احمد بن عبدالرحمن بن جاسم آل ثانی" کیساتھ ایک ملاقات میں موجودہ صورتحال میں دونوں ملکوں کے درمیان باہمی مشاورت اور ہم آہنگی کی ضرورت پر زور دیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ افسوس کی بات ہے کہ امریکہ، ایک  نئے راستے میں داخل ہوچکا ہے جو علاقے کیلئے انتہائی خطرناک ہوسکتا ہے اسی لئے موجودہ صورتحال میں دوست ممالک کے درمیان باہمی مشاورت کی ضرورت ہے۔

صدر روحانی نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے کبھی کسی کشیدگی کا آغاز نہیں کیا ہے جس کے نتیجے میں خطے میں عدم استحکام پھیلایا جائے اور حالیہ سالوں کے دوران علاقے میں تناؤ کی سب سے بڑی وجہ امریکی بیوقوفانہ اقدامات ہی تھے۔

انہوں نے دہشتگردی کیخلاف جنگ اور علاقے میں قیام سلامتی سے متعلق جنرل سلیمانی کے انتہائی اہم کردار پر تبصرہ کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کرد یا کہ عراق میں جنرل سلیمانی کی شاندار جنازے کا انعقاد سمیت ایران میں آپ کی نمازہ جنازے کے شاندار انعقاد سے امریکہ کو اپنی سنگین غلطی کا پتہ چل جائے گا۔

ایرانی صدر نے مزید کہا کہ موجودہ صورتحال میں ہمسایہ ممالک سے توقع کی جاتی ہے کہ وہ امریکہ کے اس دہشتگردانہ اقدام کی سختی سے مذمت کریں کیونکہ امریکہ نے ایران کے اعلی ترین فوجی جنرل کو کسی دوسرے ملک میں شہید کیا ہے۔

انہوں نے اس امید کا اظہار کردیا کہ خطی ممالک نے ریاستی دہشتگردی کی مذمت کرتے ہوئے یکجہتی اور اتحاد میں اضافہ کریں گے۔

روحانی نے امریکہ کے حالیہ اقدام کو عراقی قوم کی توہین اور عراق کی قومی سالیمت اور خودمختاری کی خلاف ورزی قرار دے دیا۔

انہوں نے خطے میں امریکی غیر تعمیری اور تباہ کن موجودگی پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ تمام خطی ممالک کو پتہ چلنا ہوگا کہ جب تک امریکہ خطے میں موجود ہے تب تک علاقے میں امن نہیں آئے گا۔

صدر روحانی نے ایران اور قطر کے درمیان باہمی تعلقات کے فروغ پر زور دیتے ہوئے اس امید کا اظہار کردیا کہ ہرمز امن منصوبے کے فریم ورک کے انڈر خطی ممالک کو ایک دوسرے کے اور قریب لائا جائے گا۔

اس موقع پر نائب قطری وزیر اعظم نے ہرمز امن منصوبے کی حمایت کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کردیا کہ خطی ممالک، علاقے میں قیام امن و سلامتی کیلئے ہرمز منصوبے کی روشنی میں ایک اسٹرٹیجک قدم اٹھائیں گے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 5 =