قطری وزیر خارجہ کا دورہ ایران، ظریف کیساتھ خطی امور پر گفتگو

تہران، ارنا - اعلی ایرانی کمانڈر جنرل سلیمانی کی امریکی دہشتگردی میں شہادت کے بعد قطری وزیر خارجہ نے تہران کا غیرمعمولی دورہ کیا جہاں انہوں نے اپنے ایرانی ہم منصب کے ساتھ علاقائی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا.

جاسم آل ثانی ہفتہ کے روز تہران پہنچ گئے جہاں انہوں نے ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف سے ملاقات میں علاقائی اور بین الاقوامی مسائل پر بات چیت کی.

وہ آج ایرانی صدر 'حسن روحانی' کے ساتھ ملاقات کریں گے.

یاد رہے کہ قطری دفترخارجہ نے گزشتہ روز امریکہ کے دہشتگردی حملے میں جنرل سلیمانی کی شہادت کی مذمت کئے بغیر، صرف اس واقعے پر تمام فریقین سے صبر و تحمل کرنے کا مطالبہ کیا.

یاد رہے کہ ایرانی پاسداران انقلاب فورس کی القدس بریگیڈ کے ممتاز کمانڈر جنرل "قاسم سلیمانی" جمعہ کے روز علی الصبح بغداد میں دہشت گردی کی کارروائی میں شہید ہوگئے تھے۔
امریکی وزارت دفاع پینٹاگون کے مطابق، ڈونلڈ ٹرمپ نے اس ہوائی حملہ اور جنرل سلیمانی کے قتل کا حکم دیا.
قائد اسلامی انقلاب نے جمعہ کے روز جنرل سلیمانی کی مظلومانہ شہادت پر ایران میں تین روزہ عام سوگ کا اعلان کیا.
ایرانی وزارت خارجہ نے اپنے ایک بیان میں امریکہ کے دہشتگردی اقدام کی مذمت کرتے ہوئے ایک ہنگامی نشست کا انعقاد کیا.
اسلامی جمہوریہ ایران نے تہران میں تعینات سوئٹزرلینڈ کے سفیر جن کا ملک امریکی مفادات کا نگہبان ہے، کو محکمہ خارجہ میں طلب کیا اور امریکی پیغام کا جواب ان کے حوالے کردیا.

رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے اپنے حکم میں جنرل قاآنی کو شہید میجر جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت کے بعد سپاہ قدس کا نیا سربراہ مقرر کیا ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 1 =