4 جنوری، 2020 12:13 PM
Journalist ID: 2393
News Code: 83619979
0 Persons
ایران نے امریکی پیغام کا جواب سوئس سفر کے حوالے کردیا

تہران، ارنا - جنرل سلیمانی کی شہادت کے بعد ایران نے امریکی مفادات کی نگہبانی کرنے والے تہران میں تعینات سوئس سفیر کو طلب کیا اور امریکی پیغام کا جواب ان کے حوالے کردیا.

تفصیلات کے مطابق، سید عباس موسوی نے گزشتہ روز تہران میں تعینات سوئٹزرلینڈ کے سفیر' جن کا ملک امریکی مفادات کا نگہبان ہے، کو دوسری بار کے لیے محکمہ خارجہ میں طلب کر کے امریکی پیغام پر ایران کا ردعمل سوئس سفیر کو بتایا.
گزشتہ روز موسوی نے اپنی ٹویئٹ میں امریکہ کے اس وحشیانہ اقدام کو ریاستی دہشتگردی کی واضح مثال قرار دیتے ہوئے کہا کہ امریکہ خود اس اقدام کے تمام سنگین نتا‏ئج کی ذمہ داری کو قبول کرنا چاہیے.
یاد رہے کہ ایرانی پاسداران انقلاب فورس کی القدس بریگیڈ کے ممتاز کمانڈر جنرل "قاسم سلیمانی" جمعہ کے روز علی الصبح بغداد میں دہشت گردی کی کارروائی میں شہید ہوگئے تھے۔
امریکی وزارت دفاع پینٹاگون کے مطابق، ڈونلڈ ٹرمپ نے اس ہوائی حملہ اور جنرل سلیمانی کے قتل کا حکم دیا.
قائد اسلامی انقلاب نے جمعہ کے روز اپنے ایک بیان میں جنرل سلیمانی کی مظلومانہ شہادت پر ایران میں تین روزہ عام سوگ کا اعلان کیا.
ایرانی وزارت خارجہ نے اپنے ایک بیان میں امریکہ کے دہشتگردی اقدام کی مذمت کرتے ہوئے ایک ہنگامی نشست کا انعقاد کیا.
اسلامی جمہوریہ ایران نے تہران میں تعینات سوئٹزرلینڈ کے سفیر جن کا ملک امریکی مفادات کا نگہبان ہے، کو محکمہ خارجہ میں طلب کیا ہے.
ایرانی اعلی قومی سیکوریٹی کونسل کے ترجمان نے کہا کہ آج بروز جمعہ اس کونسل کی ہنگامی نشست میں امریکہ کے وحشیانہ حملے کے نتیجے میں جنرل سلیمانی کی شہادت کا جائزہ لیا جائے گا.
رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے اپنے حکم میں جنرل قاآنی کو شہید میجر جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت کے بعد سپاہ قدس کا نیا سربراہ مقرر کیا ہے۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 13 =