2 جنوری، 2020 1:47 PM
Journalist ID: 2392
News Code: 83617850
1 Persons
عراق میں امریکی سفارتخانے کی سرگرمیاں معطل

تہران، ارنا - عراق میں موجود امریکی سفارتخانے نے یہ اعلان کیا ہے کہ حالیہ صورتحال کے بعد سفارتخانے کی سرگرمیاں تا حکم ثانی معطل رہیں گی.

امریکی سفارتخانے نے اپنے شہریوں سے کہا ہے کہ ضرورت پڑنے پر وہ عراقی شہر اربیل میں قائم امریکی قونصل خانے سے رجوع کریں.
یہ اقدام عراقی عوام کی جانب سے الحشد الشعبی کے ٹھکانوں پر امریکی حملوں کے رد عمل میں بڑے پیمانے پر احتجاج کے بعد اٹھایا گیا تھا جس میں درجنوں افراد ہلاک اور زخمی ہوئے تھے۔
آخری دنوں کے دوران ، عراقی سرزمین پر امریکی فوجی دستوں کی موجودگی کے خلاف بڑے پیمانے پر مظاہروں کا منظر رہا۔
تفصیلات کے مطابق، اتوار کے روز عراقی فوجی اڈے حشد الشعبی کے خلاف تین امریکی فضائی حملوں کے نتیجے میں کم از کم 25 افراد شہید ہوگئے۔
امریکی ڈرون کے حملوں کے بعد شہیدوں کے جنازے کے فورا بعد ہی زبردست مظاہرے شروع ہوگئے۔
مظاہرین نے عراق میں امریکی سفارت خانہ بند کرنے اور ان کے سفیر کو ملک بدر کرنے کا مطالبہ بھی کیا۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ سید علی خامنہ ای نے بھی بدھ کے روز عراقی فورسز الحشد الشعبی پر حالیہ امریکی حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے فرمایا ہے کہ امریکہ داعش کے دہشتگردوں کا انتقام الحشد الشعبی سے لے رہا ہے.
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 13 =