ایران، یورولوجی سائنس کی پیداوار میں دنیا کی 22 ویں پوزیشن پر کھڑا ہے

تہران، ارنا- نائب ایرانی وزیر صحت نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران، یورولوجی سائنس کی پیداوار سے متعلق دنیا کی 22 ویں پوزیشن پر کھڑا ہے۔

ان خیالات کا اظہار "شاہین آخوندزادہ" نے تہران کے لبافی نژاد ہسپٹال میں گردوں اور پیشاب کی نالی کے امراض سے متعلق آٹھویں سمینار کے دوران  گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ سائنس کی پیداواراور ترقی میں سب سے اہم بات یہ ہے کہ تحقیقی موضوعات کے فروغ کیلئے اسکالروں کی راہ میں حائل میں رکاوٹوں کا خاتمہ دیں۔

نائب ایرنی وزیر صحت نے کہا کہ ایرانی سائنسدانوں اور اسکالروں کی دن رات کوششوں کی وجہ سے اب ملک میں یورلوجی سائنس سے متعلق اچھے ڈیٹا بیس کی فراہمی ہوگئی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کو یورولوجی کے میدان میں سائنسی حوالوں کے معاملے میں دنیا کی 27 ویں پوزیشن حاصل ہے ۔

آخوندازہ کا کہنا ہے کہ ایران نے سنہ 2018ء میں سائنس کی پیداوار سے متعلق دنیا کی 16 ویں پوزیشن کو اپنے نام کرلیا۔

انہوں نے کہا کہ اب یورولوجی کے شعبے میں دنیا کا سب سے بہترین اسکالروں میں تہران، شہید بہشتی، گیلان اور بقیہ اللہ اللہ یونیورسٹی آف میڈیکل سائنسز کے پروفیسرز شامل ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 2 =