ایران میں 9 مہینوں کے دوران 32 ارب ڈالر سے زائد کی برآمدات

بیرجند، ارنا- اسلامی جمہوریہ ایران میں رواں سال کے 9 ابتدائی مہینوں کے دوران 5۔32 ارب ڈالر سے زائد مصنوعات کو مختلف ممالک میں برآمدات کیا گیا ہے۔

ان خیالات کا اظہار نائب ایرانی وزیر برائے صنعت، کان کنی اور تجارت "حسن مدرسی" نے صوبے جنوبی خراسان میں برآمدات کے فروغ سے متعلق ورکنگ گروپ کے اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ برآمد کنندگان کی راہ میں حائل رکاوٹوں کو دور کرنا، حکومت کی ترجیحات میں سرفہرست ہے۔

مدرسی نے کہا کہ چین، عراق، متحدہ عرب امارات، افغانستان اور ترکی ایرانی برآمدات کی بڑی منزلیں ہیں جبکہ درآمد کے معاملے میں سب سے زیادہ تر تجارتی عمل ترکی، متحدہ عرب امارات اور جرمنی سے کیاجاتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ سامان کی برآمدات اور ہدف مارکیٹوں میں تنوع پیدا کرنے کی کوششیں کی جارہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ فی الحال برآمدات ملک میں زر مبادلہ کے ذخایر میں اضافہ کرنے میں ایک اہم کردار ادا کرتی ہیں۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے رواں سال کے 8 ابتدائی مہینوں کے دوران، 55 ارب ڈالر مصنوعات کی برآمدات اور درآمدات کی ہیں۔

 اس کے علاوہ ایران میں نان آئل مصنوعات کی برآمدات کی سطح 27 ارب ڈالر سے تجاوز کر گئی جس میں گزشتے سال کے مقابلے میں 11 فیصد کی کمی دیکنھے میں آئی ہے۔

ملک کی غیر ملکی تجارت سے متعلق تازہ ترین شائع شدہ اعداد وشمار کے مطابق ایران میں رواں سال کے ابتدائی 8 مہینوں کے دوران، نان آئل مصنوعات کی برآمدات کی سطح، وزن کے لحاظ  سے 88 ہزار ٹن اور مالیت کے لحاظ سے 27 ارب ڈالر تک پہنچ گئی ہے۔

رپورٹ کے مطابق، ملک میں اسی عرصے کے دوران، درآمدات کی سطح، وزن کے لحاظ سے 22 ہزار ٹن اور مالیت کے لحاظ سے 28 ارب ڈالر تک پہنچ گئی جس میں گزشتہ سال کے مقابلے میں 5 فیصد کی کمی نظر دیکھنے میں آئی ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
6 + 11 =