آرمینیا، ایران اور یوریشیا کے درمیان پل کا کردار ادا کرنے پر تیار

تبریز، ارنا- ایران میں تعینات آرمینیا کے سفیر نے اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ ان ملک ایران اور یوریشین یونین کے رکن ممالک کے درمیان اقتصادی تعلقات کیلئے پل کا کردار ادا کرنے پر تیار ہے۔

ان خیالات کا اظہار "آرتاشس تومانیان" نے بدھ کے روز تبریز کے ایوان صنعت و تجارت میں مشرقی آذربائیجان صوبے کے تاجروں اور کاروباری افراد کے ساتھ ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا.

انہوں نے مزید کہا کہ آرمینیا کی یوریشین اقتصادی یونین کے رکن ممالک کیساتھ مشترکہ زمینی سرحدیں ہیں جو اس حوالے سے مددگار ثابت ہوسکتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ آرمینیا کی معاشی پالیسی، آزاد اقتصاد پر مبنی ہے اور ملک کی معاشی سرگرمیوں کو نجی شعبے کے سپرد کردیا گیا ہے اور آرمینیا کی نئی معاشی تبدیلیاں بھی اسی سلسلے میں ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ آرمینیا، معاشی تعلقات اور کاروباری شعبے میں سرگرم کارکنون کی حمایت کے سلسلے عالمی معیار کے مطابق عمل کرنے کی کوشش کر رہا ہے اور کارپوریٹ رجسٹریشن، رئیل اسٹیٹ اور بینکنگ خدمات بھی اس سے مستثنی نہیں ہیں۔

انہوں نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ ان کا ملک صوبے مشرقی آذربائیجان کیساتھ تجارتی اور اقتصادی تعلقات کے فروغ پر دلچسبی رکھتا ہے۔

تومانیان نے کہا کہ آرمینیا، ایران سے موصلات اور انفارمیشن ٹیکنالوجی، زراعت اور زرعی مصنوعات کی پروسیسنگ، زیورات، تکنیکی اور انجینئرنگ خدمات، قابل تجدید توانائی، دواسازی ، سیاحت، اور بجلی اور گیس کے شعبوں میں باہمی تعاون پر تیار ہے۔

اس موقع پر تبریز کے چیمبر آف کامرس کے سربراہ "یونس ژائلہ" نے کہا ہے تبریز کے سرگرم اقتصادی کارکنوں کیساتھ  آرمینیا کے سفیر کی ملاقات، دونوں ملکوں کے درمیان تجارتی تعلقات کے فروغ سمیت باہمی تعاون کی راہ میں حائل رکاوٹوں کو دور کرنے میں مددگار ثابت ہوسکتی ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 5 =