تبریز یونیورسٹی اور دنیا کی 200 جامعات کے درمیان تعاون کی مفاہمتی یادداشتوں پر دستخط

تبریز، ارنا- ایرانی صوبے مشرقی آذربائیجان میں واقع تبریز یونیورسٹی کے سربراہ نے کہا ہے کہ اس یونیورسٹی اور دنیا کی 200 جامعات کے درمیان تعاون کی مفاہمتی یاداشتوں پر دستخط کیے گئے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار "میر رضا مجیدی" نے ہفتہ کے روز تبریز یورنیورسٹی میں زیر تعلیم غیر ملکی طلباء کیساتھ ایک اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ گزشتہ 800 سال پہلے شہر تبریز میں "ربع رشیدی" نامی یورنیورسٹی کا قیام عمل میں آیا جس میں غیر ملکی طلباء، دنیا کی مختلف زبانوں میں تعلیم حاصل کر رہے تھے۔

مجیدی نے کہا کہ ربع رشیدی در اصل ایک قسم کی کاروباری یونیورسٹی تھی اور تبریز یونیورسٹی کی سنگ بنیاد بھی اسی مقصد کے حصول کیلئے رکھی گئی۔

انہوں نے تبریز یونیورسٹی میں زیر تعلیم غیر ملکی طلباء کو اپنے اپنے ملک کے ثقافتی اور سائنسی سفیر قرار دیتے ہوئے ان سے سفارش کی کہ وہ تعلیم اور ضروری صلاحیتوں کے حصول سے ایران کی ثقافت اور سائنس سے اچھی یادیں بنا کر ان کو اپنے ملک کیلئے بطور تحفہ ساتھ لیں۔

مجیدی نے تبریز یورنیورسٹی اور دنیا کی 200 جامعات کے درمیان تعاون کی مفاہمتی یاداشتوں پر دستخط کا ذکر کرتے ہوئے اسے اس یونیورسٹی اور دنیا کے دیگر ممالک کی جامعات کے درمیان سائنسی تعلقات کے فروغ کے پُختہ عزم کی علامت قرار دے دیا۔

*** تبریز یونیورسٹی میں قونصلر آفس قائم کیا جائے گا

اس موقع پر تبریز یورنیورسـٹی کے نائب سربراہ برائے طلبا کے امور نے کہا کہ مستقبل قریب میں قونصلر آفس قائم کیا جائے گا اور طلباء کی رہائش کے مسائل حل ہوجائیں گے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 1 =