ایران کی فلسطین پر سات دہائیوں سے جاری صہیونی قبضے کی مذمت

تہران، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے فلسطین سے یکجہتی کے عالمی دن کے موقع پر گزشتہ ۷ دہائیوں سے جاری جابر صہیونیوں کے قبضے اور عالمی برادری کی مسلسل خاموشی کی مذمت کی ہے.

ترجمان دفترخارجہ "سید عباس موسوی" نے ایک ٹوئٹر ایک پیغام میں کہا ہے کہ ناجائز صہیونی ریاست سات دہائیوں سے شرمناک اور بے مثل جارحیت کرکے عالمی برادری سات دہائیوں سے اس کے قتل عام، جارحیت ، زیادتی ، جرم ، لوٹ مار اور نسل کشی کے سامنے خاموشی کے ساتھ شرمندہ ہے۔
تفصیلات کے مطابق، 1947 کے 29 نومبر کو اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی نے فلسطین کی تقسیم سے متعلق غیر منصفانہ قرار داد کو پاس اور اسے منظور کرلیا۔
اس قرارداد کے مطابق ، فلسطین کو دو حصوں میں تقسیم کیا گیا تھا اور جنرل اسمبلی نے یہودی حکومت کے قیام کے لئے اس کا ایک حصہ اور فلسطین کی حکومت کے لئے ایک اور حصہ پر غور کیا تھا، مگر صہیونیوں نے 1948 کے مئی مہینے میں فلسطین پر قبضہ جما لیتے ہوئے ان کے خودمختار ملک بننے کو روک کردیا ہے۔
1977 کو جنرل اسمبلی نے 29 نومبر کو فلسطین سے یکجہتی کے عالمی دن کو رکھا دیا۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 0 =