ایران میں ناروے کے ناظم الامور کی طلبی، قرآن کی بے حرمتی پر احتجاج ریکارڈ

تہران، ارنا-  اسلامی جمہوریہ ایران میں تعینات ناروے کے ناظم الامور کو ناروے کے شہر کرسٹیان سینڈ میں قرآن کی بے حرمتی کے واقعے پر دفترخارجہ طلب کرتے ہوئے اس حوالے سے شدید احتجاج کیا گیا.

تفصیلات کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران نے حالیہ دنوں میں کہ ناروے کے شہر کرسٹیان سینڈ میں قرآن کریم کی بے حرمتی واقعے کیخلاف ردعمل میں دارالحکومت تہران میں تعینات ناروے کے ناظم الامور کو طلب کرکے اس اقدام کیخلاف شدید احتجاج کیا.

اسلامی جمہوریہ ایران نے حکومت ناروے کو انتہا پسندی اور تشدد کو پھیلانے میں اس طرح کے اقدامات کے خطرناک نتائج سے خبردار کیا۔

اس موقع پر ایرانی محکمہ خارجہ میں تعینات شمالی یورپ کے امور کے سربراہ نے ناروے کے اس اقدام کے ذریعے دنیا کے کروڑوں مسلمان کے جذبات کو مجروح کرنے پر تبصرہ کرتے ہوئے ناروے کے ناظم الامور کو واضح کیا گیا کہ اظہار آزادی کے نام پر اس طرح کے اقدامات کا کوئی جواز نہیں بنتا۔

ایران نے ناروے کے حکام پر زور دیا گیا ہے کہ اس حرکت کے ذمہ دار کو انصاف کے کٹہرے میں لائیں اور مستقبل میں اس طرح کے واقعات سے بچنے کے لیے اقدامات کیے جائیں.

واضح رہے کہ ناروے کے ایک شہر کرسٹیان سینڈ میں گزشتہ دنوں ایک اسلام مخالف ریلی نکالی گئی تھی اور اسی دوران یہ لوگ ایک جگہ جمع ہوگئے تھے، جہاں ایک شخص نے قرآن پاک کی بے حرمتی کی تھی۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 4 =