ایران، عراق سے تجارت کو 20 ارب ڈالر تک لے جانے کیلئے پُرعزم

تہران، ارنا-  ایران اور عراق کے تجارتی تعلقات کی حکمت عملی، مشترکہ مقاصد پر مبنی ہے اور دونوں ممالک باہمی تجارت کو فروغ دینے اور درکار پیداواریت کو بڑھانے کے لئے مشترکہ کوششوں پر زور دیتے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار عراق میں تعنیات ایران کے تجارتی مشیر"ناصر بہزاد" نے تجارت کے شعبے میں ایران اور عر اق کے تعلقات کے تناظر میں کیا۔

انہوں نے دنیا سے عراق کے درآمد کیے گئے مصنوعات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ان مصنوعات میں مشینری اور صنعتی مشینری، ادویات اور طبی سامان، بجلی کا سامان، کھانے پینے کی مصنوعات، آئرن اور اسٹیل کی مصنوعات کا نام لیا جاسکتا ہے.

بہزاد نے کہا کہ عراق میں ایران کی زیادہ تر برآمدات کا انتظام اب مارکیٹ کی طلب کے مطابق کیا جاتا ہے اور اسی لحاظ سے ملک میں تیار کی جانے والی ایرانی مصنوعات کو عراقی مارکیٹ میں بہت بڑی مانگ ہے۔

انہوں نے مزید کہا ایران اور عراق کے تجارتی تعلقات کی حکمت عملی کی بنیاد پر روزگار کی پیدواری، اقتصادی توسیع اور زر مبادلہ کے ذخائز میں اضافہ ہونے کے مقصد سےعراق کیساتھ تجارتی تعلقات کو 20 ارب ڈالر تک لے جانے کیلئے منصوبہ بندی کی گئی ہے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ گزشتہ سال کے دوران ایران اور عراق کی نان ائل مصنوعات کے تجارتی حجم کی شرح 10 ارب ڈالر تھی جس میں رواں سال کے دوران قابل قدر اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 0 =