دہشتگرد پیدا کرنے والی ریاستیں اپنے خودساختہ مسائل خود کو ایران سے منسوب نہ کریں: ترجمان

تہران، ارنا- ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے منامہ کے حالیہ اجلاس میں ایران کیخلاف بعض اراکین کے بے بنیاد الزمات کے رد عمل میں کہا ہے کہ دہشت گردی اور انتہا پسندی پیدا کرنے والے ممالک، اپنے خودساختہ مسائل کو اسلامی جمہوریہ ایران سے منسوب نہ کریں۔

ان خیالات کا اظہار سید "عباس موسوی" نے اتوار کے روز بحرین میں منعقدہ منامہ اجلاس کے دوران، بعض اراکین کیجانب سے ایران کیخلاف لگائے گئے الزامات کے ردعمل میں کرتے ہوئے ان کو سرے سے بے بنیاد قرار د یا اور سختی سے تردید کی۔

 انہوں نے کہا کہ وہ ممالک جو خود دہشتگردی اور انتہا پسندی کی رواج دیتے ہیں اور حق ہمسایگی کے اصل کو پاؤں تلے روندتے ہوئے دوسرے ممالک کے اندرونی معاملات میں مداخلت کرتے ہیں اور خطے میں غیر ملکی فوجیوں کی تعینات سے علاقے کی سلامتی کو خطرے میں ڈالتے ہیں، کو اپنے خودساختہ مسائل کو ایران سے منسوب کرنے کا کوئی حق نہیں ہے۔

ایرانی ترجمان نے کہا کہ یمن میں سعودی قیادت میں فوجی جارحیت نے دسیوں ہزار بے گناہ خواتین اور بچوں کو پھاڑ ڈالا اور اس کے تمام بنیادی ڈھانچے کو تباہ اور جائز حکومتوں کا تختہ الٹنے کی کوشش میں نوآبادیاتی طرز عمل کا سہارا لیا، کو جاننا ہوگا کہ ان کے یہ اقدامات خطے اور دنیا کی عوامی رائے کی تاریخی یادداشت سے مٹ نہیں ہوں گے۔

انہوں نے ان ممالک کو اپنے خام خیالیوں سے دور رہنے اور حقیقت کو ماننے سمیت علاقے میں قیام استحکام اور سلامتی کی فراہمی کیلئے اجتماعی تعاون اور مذاکرات کی دعوت دی۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 1 =