امریکی حکام، ایرانی عوام سے ہمدردی کی پوزیشن میں نہیں ہیں: ایران

تہران، ارنا- ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ امریکی حکام، ایرانی عوام کیساتھ ہمدردی کرنے کی پوزیشن میں نہیں ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایرانی قوم نے اس سے پہلے بھی بہت مشکل حالات کو پس پشت ڈال دیا ہے اور وہ آج بھی اس مشکل حالات سے اچھی طرح گزریں گے اور اپنے اندرونی مسائل کا حل خود ہی کریں گے۔

 ان خیالات کا اظہار سید "عباس موسوی" نے امریکی وزیر خارجہ کے حالیہ مداخلت پسندانہ بیانات کے رد عمل میں کیا۔

انہوں نے مائیک پمپیئو کی حالیہ ہزرہ سرائی کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ امریکی وزیر خارجہ کیجانب سے ایرانی عوام کی حمایت، بہت دور کی بات ہے۔

موسوی نے ایران مخالف امریکی مقاصد پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکی وزیر خارجہ ان لوگوں سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہین جن پر شدید معاشی پابندیاں عائد کی ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ امریکی وزیر خارجہ نے اس سے پہلے بھی واضح طور پر کہا تھا کہ ایرانی عوام کو ہتھیار ڈالنے کے لئے بھوک لگی ہوگی۔

ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے مزید کہا کہ ایرانی قوم ایک پختہ قوم ہے جنہوں نے اس سے پہلے بھی بہت مشکل حالات کو پس پشت ڈال دیا ہے اور وہ آج بھی اس مشکل حالات سے اچھی طرح گزریں گے اور اپنے اندرونی مسائل کا حل خود ہی کریں گے۔

انہوں نے پاکستانی آرمی چیف کے حالیہ دورہ ایران کو مثالی قرار دیتے ہوئے کہا کہ پاک ایران مسلح افواج کے سربراہوں نے باہمی مسائل سمیت مشترکہ سرحدوں کی سلامتی پر بات چیت کی۔

 یہ بات قابل ذکر ہے کہ پاکستانی مسلح افواج کے سربراہ جنرل "قمرجاوید باجوہ" آج بروز پیر کو ایک اعلی سطحی وفد کی قیادت میں دورہ ایران پر پہنچ گئے جہاں انہوں نے اسلامی جمہوریہ ایران کے اعلی حکام کیساتھ ملاقاتیں کریں گے۔

 ترجمان کے مطابق ان ملاقاتوں میں دونوں فریقین باہمی اور سیکیورٹی کے مختلف معاملات بالخصوص سرحدی اور علاقائی تعاون کے شعبوں میں تبادلہ خیال کریں گے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 1 =