ایران سے تعلقات کی توسیع کیلئے موجودہ مواقع کا جائزہ لیں گے: جنوبی افریقہ

ایران میں تعینات جنوبی افریقہ کے سفیر نے کہا ہے کہ ان کا ملک اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ مزید دوطرفہ تعلقات کو بڑھانا چاہتا ہے اور اسی مقصد کے لئے موجودہ مواقع اور صلاحیتوں کا از سرنو جائزہ لیا جائے گا.

یہ بات ‘ویکا خومالو’ نے ایرانی صوبے فارس کے شہر شیراز کے چیمبر آف کامرس کے سربراہ  ' جمال رازقی 'کے ساتھ ایک ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے کہا کہ ایران اور جنوبی افریقہ کے مابین مختلف علوم میں مہارتوں کے تبادلے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ہم اس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ دونوں ممالک اپنی صلاحیتوں اور قابلیتوں پر انحصار کے ساتھ ایک دوسرے کی کچھ ضروریات کو پورا کرسکتے ہیں.

افریقی سفیر نے کہا کہ ہم فی الحال دونوں ممالک کے تعلقات کو مستحکم کرنے کے لئے موجودہ صلاحیت کا جائزہ لے رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم لوگوں خاص طور پر تاجروں اور کاروباری افراد کی ضروریات اور مفادات کو پورا کرنے کے لیے ایران اور جنوبی افریقہ کے تعلقات کے درمیان ٹھوس اور عملی اقدامات کے منتظر ہیں تو ہم اس کام کے حصول کے لیے ضروری اقدامات کو اٹھائیں گے.

افریقی عہدیدار نے صوبے فارس کی مختلف صلاحیتوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ اس صوبے کے دلکش ثقافتی مقامات ہمارے لیے بہت اہم ہے تو ہم مشترکہ کمیشن کی شکل میں اس موضوع کا پیچھا کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ ہم گزشتہ کے مشکل دنوں میں ایرانی عوام کی مدد کو ہرگز فراموش نہیں کریں گے اور آج وہ آگاہانہ طور پر ایرانی قوم اور حکومت کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے رہے ہیں۔

انہوں نے گزشتہ مہینے میں ایران اور جنوبی افریقہ کے درمیان 14 ویں مشترکہ کمیشن کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس نشست میں فریقین مختلف مسائل کے حل اور باہمی تعلقات کے فروغ پر بات چیت کی گئی.

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@.

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 6 =